2017ء مہنگائی کا سال، ڈائریکٹر پرائس شماریات کا اعتراف

2017ء مہنگائی کا سال، ڈائریکٹر پرائس شماریات کا اعتراف


اسلام آباد(24نیوز) اشیائے ضروریہ کی قیمتوں کو پر لگے تو حکومت بڑھتی مہنگائی کو کنٹرول کرنے میں ناکام ہوگئی،6ماہ کے دوران پیا ز کی قیمتوں میں 112 فیصد اورٹماٹر 14 فیصد مہنگے ہوگئے،دسمبر کے ایک مہینے میں مرغی کے نرخوں میں 24فیصد اضافہ ہوا  .

اس حوالے سے ڈائریکٹر پرائس شماریات ڈویژن عتیق الرحمانکا کہنا تھا  کہ پچھلے برس کے مقابلے میں دسمبر2017 میں مہنگائی میں 4.57 فیصد اضافہ ہوا۔ جولائی سے دسمبر کے دوران اشیا کی قیمتیں 3.7 فیصد بڑھیں۔

ڈائریکٹر شماریات  کے مطابق گزشتہ سال کے مقابلے میں رواں مالی سال کے پہلے 6 ماہ میں پیاز کی قیمت میں 112 فیصد ، ٹماٹر 27 فیصد،ادویات 17 فیصد، چاول 14 فیصد، چائے کی پتی 11 فیصد اور آلو 10 فیصد مہنگے ہوئے ۔ تعلیم کے اخراجات میں بھی 11 فیصد اضافہ ہوا۔

انہوں نے واضح کیا کہ دسمبر2017 میں مرغی کی قیمت میں 24فیصد اضافہ ہوا،گیس سلنڈر 8فیصد،پیٹرول2 فیصد،ڈیزل 1.5فیصد اور مٹی کے تیل کی قیمت بھی 4.5فیصد اوپر گئی ہے۔