حکومت کےقبائلی اضلاع سے کئے وعدے وفا نہ ہوسکے

حکومت کےقبائلی اضلاع سے کئے وعدے وفا نہ ہوسکے


پشاور(24نیوز) تحریک انصاف حکومت کی جانب سے قبائلی عوام سے کئے وعدے ایفانہ ہوسکے، خیبرپختونخوامیں انضمام کے بعد وفاقی حکومت نےقبائلی اضلاع کومزیدپیچھے دکھیلنے کی کوشش کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کی حکومت قبائلی عوام سے کئے وعدے پورے کرنے میں ناکام رہی، فاٹا کے خیبرپختونخوامیں انضمام کے بعد وفاقی حکومت کاقبائلی اضلاع کومزیدپیچھے دکھیلنے کی کوشش کی، قبائلی اضلاع کے مالیاتی شعبوں کے لیے مختص فنڈزمیں اضافے کی بجائے کروڑوں روپے کی کٹوتی کی گئی، کٹوتی سے دہشت گردی سے متاثرہ اضلاع میں صحت،تعلیم اور دیگرشعبےمزید متاثرہونے کا خدشہ پیداہوگیا۔

دستاویزات کے مطابق تعلیم کے شعبوں میں 40کروڑ47لاکھ37ہزاراورصحت فنڈزسے3کروڑ37لاکھ سے زائدکی کٹوتی ہوئی، پبلک ہیلتھ اینڈانجیئنرینگ کےمختص فنڈسے88کروڑ12لاکھ57ہزار،مواصلات سے1ارب14کروڑ92لاکھ کم کردئیے،لائیوسٹاک سے13کروڑ44لاکھ10ہزار،جنگلات سے15کروڑ93لاکھ51ہزارروپے  کی کمی کی گئی۔

علاوہ ازیں علاقائی ترقیاتی فنڈسے70کروڑ59لاکھ18ہزارروپے اورآبپاشی کے منصوبوں سے10کروڑسے زائدکی کٹوتی کی گئی۔

M.SAJID KHAN

CONTENT WRITER