مجلس علماء اسلام کا الیکشن میں چوہدری نثار کی مکمل حمایت کا اعلان

مجلس علماء اسلام کا الیکشن میں چوہدری نثار کی مکمل حمایت کا اعلان


اسلام آباد (24 نیوز) سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار نے ن لیگ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ جنھوں نے پارٹی قیادت کو گالیاں دیں ان کو ٹکٹیں دیے گئے، نواز شریف سے پوچھیں میں نے ان سے ایسی کون سی بیوفائی کی ہے، یہاں کام کرنے کی کوئی ویلیو نہیں ہے۔

 24 نیوز ذرائع کے مطابق اسلام آباد میں مجلس علمائے اسلام پاکستان کی جانب سے عید ملن پارٹی کا اہتمام کیا گیا۔ جس میں مسلم لیگ ن کے ناراض رہنما چوہدری نثار علی خان بطور مہمان خصوصی شریک ہوئے۔ اس موقع پر مجلس علماء اسلام پاکستان نےالیکشن میں چوہدری نثار علی خان کی مکمل حمایت کا اعلان کردیا۔

یہ خبر بھی پڑھیں:  بنوں کے فرعون کا مقابلہ کرنے کیلئے یہاں سے الیکشن لڑنے کا فیصلہ کیا ہے: عمران خان

سابق وزیرداخلہ چوہدری نثارعلی خان نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ وہ جھوٹ بولتے ہیں نہ منافقت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جنھوں نے نواز شریف کو گالیاں دیں ان کو ٹکٹیں دی گئیں۔ نوازشریف سے پوچھیں کہ میں نے ان سے ایسی کون سی بے وفائی کی ہے۔

چوہدری نثار علی خان کا کہنا تھا کہ مخالفین بات کا بتنگڑ بنا دیتے ہیں۔ عالم اسلام اور پاکستان کو شدید خطرات لاحق ہیں۔ ناموس رسالت پر بہت بڑا حملہ ہوا۔ میں نے اسلامی ممالک کے سفراء سے کہا کہ آواز اٹھائیں اور انھوں نے میری حمایت کی۔

پڑھنا مت بھولئے: بلاول بھٹو زرداری نے اپنی پہلی انتخابی مہم کا آغاز کردیا

انہوں نے مزید کہا کہ میں نے فیس بک کے نائب صدر سے کہا کہ میرا ایمان سوشل میڈیا سے اہم ہے۔ فیس بک کا نمائندہ واپس گیا تو جلد سب ختم ہوگیا۔ ہم نے دہشتگردی کے خاتمہ کے لیے علما کرام سے مدد لی پر یہاں کام کرنے کی کوئی ویلیو نہیں ہے۔

سابق وزیر داخلہ نے اپنے خاندان کی ملک کے لئے قربانیوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن کے خاندان اور خون میں ہے۔ قیام پاکستان کے وقت ان کے والد جیل میں تھے۔ کوئی ایسی جنگ نہیں جس میں میرے خاندان کا کوئی فرد شریک نہ ہو۔