ایسا کام جو کسی سعودی خاتون نے نہ کیا ہوگا

ایسا کام جو کسی سعودی خاتون نے نہ کیا ہوگا


نیویارک( 24نیوز ) سعودی عرب جدیدیت کی دوڑ میں تیزی سے بھاگ رہا ہے،مردوں کو تو پہلے ہی آزادی تھی لیکن خواتین کو نہیں۔خواتین کو مختلف بندشوں سے آزاد کیا جارہا ہے،حال ہی میں ایک سعودی خاتون نے ایسا کام کیا ہے جو تاریخ میں کسی سعودی خاتون نے نہیں کیا تھا۔
سب جانتے ہیں کہ شوبز انڈسٹری سے تعلق رکھنے والے ہر مرد اور خاتون کی خواہش ہوتی ہے کہ وہ ہالی ووڈ کا حصہ بنے،وہاں کی فلموں میں کام کرے، عہد حسن کامل سعودی عرب کی نامور اداکارہ ہیں جو اب ہالی ووڈ کی فلم میں کریں گی۔

 یہ بھی پڑھیں: رنبیر کپور ، عالیہ بھٹ کے دیوانے نکلے

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق عہد حسن کامل پہلی سعودی اداکارہ ہیں جو ہالی ووڈ کی کسی فلم میں کام کررہی ہیں۔ 14 نومبر 1980 کو سعودی دارالحکومت ریاض میں پیدا ہونے والی عہد حسن کامل 1998 میں امریکا منتقل ہوگئی تھیں اور انھوں نے نیویارک کی فلم اکادمی میں فلم اور اداکاری کی اعلیٰ تعلیم حاصل کی تھی۔
عہد حسن کامل نیٹ فلیکس اور برطانوی نشریاتی ادارے کی مشترکہ منی ڈراما سیریز ” کولیٹرل“ میں بھی اداکاری کے جوہر دکھا چکی ہیں اور اس کے بعد ان کا نام ” ووگ عربی میگزین“ میں شامل کیا گیا تھا۔ رواں برس ریلیز ہونے والی ایکشن اور مارڈھاڑ سے بھرپور ہالی ووڈ فلم ’بی اینگ‘ کے ہدایتکار ڈوگلس سی ولیم ہیں۔