شکر گڑھ: مردم شماری تصدیق کے نام پر جھوٹی کالز، شہریوں کو لوٹا جانے لگا


شکرگڑھ (24 نیوز) مردم شماری تصدیق کے نام پرجھوٹی کالز کرکے شہریوں کولوٹا جانے لگا۔ حساس ادارے کے افسر بن کر لوگوں سے بینک اکاؤنٹ مانگے جانے لگے۔ نوسربازوں نے کئی افراد کوہزاروں کی نقدی سے محروم کردیا۔

تفصیلات کے مطابق نوسربازسادہ لوح عوام کو لوٹنے کے نت نئے طریقے ایجاد کرتے رہتے ہیں۔ شکرگڑھ میں مردم شماری کی تصدیق کے نام پرلوگوں کو لوٹاجانے لگا۔ حساس ادارے کے افسربن کرلوگوں سے ان کے بینک اکاؤنٹ مانگے جاتے ہیں۔ نوسرباز خود کو کبھی نیب اورکبھی حساس ادارے کا افسرظاہرکرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھئے: پاکستان فنانشنل ایکشن ٹاسک فورس کی گرے لسٹ میں شامل، دفترخارجہ کی تصدیق

شکرگڑھ میں فاخرہ جبین نامی خاتون کے اکاؤنٹ سے 52ہزارروپے نکل گئے۔ ریٹائرڈ پولیس اہلکار ارشد کے اکاؤنٹ سے بھی 37 ہزارروپے نکل گئے۔

واضح رہے کہ انٹر سروسز پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) نے گزشتہ ماہ ہی لوگوں کوفراڈ کرنے والے اس گروہ سے آگاہ کردیا تھا۔ آئی ایس پی آر نے بیان جاری کیا تھا کہ کچھ لوگ فوج کے اہلکار بن کرلوگوں کو فون کالز کے ذریعہ لوٹ سکتے ہیں۔

ادارے نے وارننگ جاری کی تھی کہ نوسربازوں کوذاتی معلومات فراہم نہ کی جائیں۔