آج صحافیوں کے خلاف جرائم سے تحفظ کا عالمی دن منایا جارہا ہے

آج صحافیوں کے خلاف جرائم سے تحفظ کا عالمی دن منایا جارہا ہے


 لاہور (24 نیوز) ہرسال دنیا بھرمیں سینکڑوں  صحافی اپنی ذمہ داریاں نبھاتے ہوئے  جاں بحق ہو جاتے ہیں، صحافت ریاست  کا چوتھا ستون ماناجاتا ہے لیکن آج دنیا بھر میں بڑھتے تشدد کی وجہ سے صحافی غیرمحفوظ ہوچکے ہیں۔

 اس میں کوئی شک نہیں کے صحافت ایک مشکل ترین شعبہ ہےاوروطن سے محبت رکھنے والا صحافی بغیر کسی ڈر وخوف کے اپنی جان کو خطرے میں ڈال دیتا ہے,  لیکن لمحہ فکریہ ہے کہ صحافی کی جان کی حفاظت کے لیے حکومت نے اب تک کوئی اقدام نہیں کیے۔ دہشتگردی،بم دھماکے، ٹارگٹ کلنگ اور دھونس دھمکی صحافیوں کے کام کے ساتھ ساتھ ان کی نجی زندگیوں پر بھی اثر انداز ہوئےجو آزادی اظہار رائے کی راہ میں بہت بڑی رکاوٹ ہیں۔
موجودہ صورتحال میں صحافیوں کیخلاف جرائم سے تحفظ کا عالمی دن شدت سے اس بات کا متقاضی ہے کہ ریاست اور صحافتی ادارے آزادی صحافت اور صحافیوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے اپنی ذمہ داریاں پوری کریں تاکہ معاشرےکی بہتری اور حقیقی معنوں میں تبدیلی آسکے۔