سندھ کے وکلا نے تحریک چلانے کی دھمکی دے دی


بینچ اور بار میں بڑھتے فاصلے سندھ بار کاؤنسل سمیت کراچی کے وکلا نے جسٹس قاضی فائز عیسی کیس واپس نہ لینے کی صورت میں تحریک چلانے کی دھمکی دے دی۔ وکلا رہنما کہتے ہیں ایسے فیصلوں سے گریز کیا جائے جس سے خفیہ ہاتھوں کا شبہ پیدا ہو۔

تفصیلات کے مطابق سندھ بار کاؤنسل، کراچی بار، ملیر بار اور دیگر وکلا رہنمائوں نے جسٹس فائز عیسیٰ کے خلاف درخواست پر کارروائی کرنے پر شدید تحفظات کا اظہار کیا۔

یی بھی پڑھیں:”اب ایسا نہیں ہوگا“وزیر اعظم کی ملاقات کے بعد چیف جسٹس بول پڑے
  وکلا نے کہا کہ دو سال بعد جسٹس کے خلاف درخواست کی سماعت شروع ہوئی جب انہوں نے حدیبیہ پیپر ملز اور پانامہ کیس پرریمارکس دیئے۔

وکلا نے ہائیکورٹ کے ججز کو سپریم کورٹ میں تعینات کرنے کے طریقہ کار پر بھی تشویش کا اظہار کیا۔ وکلا نے 21 اپریل کو کنونشن بلانے کا اعلان کردیا اور کہا کہ کنونشن میں اہم فیصلے کیے جائیں گے۔