45 لاکھ روپےسے زائد کی نقب زنی کا ڈراپ سین

45 لاکھ روپےسے زائد کی نقب زنی کا ڈراپ سین


کراچی ( 24نیوزکراچی کے علاقے پریڈی میں موبائل مال میں 45 لاکھ روپےسے زائد کی نقب زنی کے معاملے میں پیش رفت ہوئی ہے، ملزم موبائل مال کا دوکاندار نکلا۔

تفصیلات کے مطابق  پریڈی میں موبائل مال میں 45 لاکھ سے زائد کی نقب زنی کا معاملہ حل ہوگیا، ایک کروڑ سے زائد کی نقب زنی میں ملوث ملزمیاسر اعوان موبائل مال کا دوکاندار ہی نکلا،24 نیوز نے انکشافات پر مبنی بیان حاصل کرلیا، ملزم کا کہناتھا کہفلموں میں دیکھ کر سی سی ٹی وی پر اسپرے کا طریقہ سیکھا تھا۔

مال میں 50 لاکھ سے پہلے بھی 50 لاکھ کی نقب زنی بھی کرچکا ہوں،ایک سال سے اسی موبائل مال میں موبائل فون کا کاؤنٹر کرایے پر لے رکھا ہے،چار ماہ قبل اسی مال میں 50 لاکھ کی نقب زنی کی تھی،پانچ روز قبل 45 لاکھ سے زائد کے موبائل فون چوری کیے۔

ملزم نے انکشاف کیا کہنقب زنی کے لیے مال کے اندر 36 گھنٹے تک موجود رہا تھا،تین روز تک پیٹیز اور بسکٹ کھا کر گذارا کیا، واردات کے بعد فرار ہونے کے لیے بینک کے تالے توڑ دیے تھے،ایک اور بڑی دکان بھی تھی جس میں 7 کروڑ کے موبائل فون تھے لیکن اسے چھوڑ دیا،دونوں وارداتیں مکمل ہونے کے بعد اپنے کاؤنٹر پر چوری کا مال چھپایا۔

دونوں وارداتوں میں چھپنے کے لیے ایک ہی خالی دکان کا انتخاب کیا تھا،وارداتیں معاشی پریشانی کی وجہ سے کی،گذشتہ واردات کے موبائل فون کاؤنٹرپرایک ایک کر کے بیچتا رہا،پی ٹی اے کی جانب سے موبائل فون بندش کے بعد کئی موبائل بند ہوگئے۔

 پولیس کا کہناتھا کہ ملزم کے کاؤنٹر میں رکھے گئے موبائل فونز کا بھی فارنزک کیا، فارنزک میں 7 موبائل فون گذشتہ نقب زنی میں چوری کیے گئے نکلے۔