وزیراعلیٰ بلوچستان کے خلاف تحریک عدم اعتماد جمع کرا دی گئی


کوئٹہ (24 نیوز) وزیراعلیٰ بلوچستان کے خلاف تحریک عدم اعتماد جمع کرا دی گئی۔ صوبائی وزرا سرفراز بگٹی اور سرفراز ڈومکی نے مستعفی ہونے کا اعلان کردیا۔

بلوچستان میں ن لیگ کی اتحادی حکومت بحران کا شکار ہے، وزیراعلیٰ ثنااللہ زہری کی حکومتی کشتے ہچکولے کھانے لگی ہے جس سے حکمران جماعت کے ارکان اور وزرا نے بھی چھلانگیں لگانا شروع کردی ہیں۔

کوئٹہ میں تازہ ترین صورت حال یہ ہے کہ صوبائی وزیر ماہی گیری میر سرفراز ڈومکی کے استعفے کے بعد وزیر داخلہ سرفراز بگٹی نے بھی مستعفی ہونے کا اعلان کر دیا ہے۔

اس سے پہلے بلوچستان اسمبلی کے 14 ارکان نے وزیراعلیٰ ثنااللہ زہری کے خلاف تحریک عدم اعتماد جمع کرائی تھی، بلوچستان اسمبلی 65 ارکان پر مشتمل ہے جن میں سے 52 حکومتی اتحاد میں شامل ہیں۔

عدم اعتماد کی تحریک پر میر قدوس بزنجو، میر کریم نوشیروانی، آغا رضا، میر خالد لانگو اور نوابزادہ طارق مگسی نے دستخط کیے، ڈاکٹر رقیہ، سعید ہاشمی، محمد اختر مگسی، زمرد خان اچکزئی، حسین بانو، شاہدہ رؤف، خلیل الرحمان، عبدالمالک کاکٹر اور امان اللہ نوتیزئی نے بھی تحریک عدم اعتماد پر دستخط کیے۔