خواجہ آصف کی نااہلی فیصلہ کیخلاف درخواست سماعت کیلئے مقرر

خواجہ آصف کی نااہلی فیصلہ کیخلاف درخواست سماعت کیلئے مقرر


اسلام آباد (24 نیوز) سابق وزیر خارجہ خواجہ آصف نے تاحیات نااہلی سے متعلق کیس کو سپریم کورٹ میں چینلج کر دیا۔ عدالت نے درخواست ابتدائی طور پر سماعت کے لیے منظور کر لیا۔ درخواست میں اسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ کالعدم قراردینے اور قومی اسمبلی کی رکنیت ختم کرنے کا الیکشن کمیشن کا نوٹیفکیشن ختم کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

24 نیوز کے مطابق سابق وزیرخارجہ خواجہ آصف نے تاحیات نااہلی کو سپریم کورٹ میں چینلج کردیا۔خواجہ آصف نے اپنے وکیل کے ذریعہ سپریم کورٹ میں دائر درخواست میں موقف اپنایا ہے کہ وہ غیر ارادی طور پر اکاونٹ ظاہر کرنے میں ناکام رہے۔ بینک اکاؤنٹ میں کل رقم کا اعشاریہ پانچ فیصد بھی موجود نہیں ہے۔ اس لیے قومی اسمبلی کی رکنیت بحال کی جائے۔

یہ بھی پڑھیں: میاں صاحب اور خواجہ صاحب کے بعد احسن اقبال بھی قانون کے شکنجے میں آگئے 

درخواست میں کہا گیا ہے کہ موجودہ رٹ دائر ہونے سے قبل بینک اکاؤنٹ اور اقامہ ظاہر کر چکا تھا۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلہ میں ملکی اور متحدہ عرب امارات (یو اے ای) قوانین کو مدنظر نہیں رکھا گیا۔ درخواست گزار نے ہائیکورٹ سے حقائق چھپائے۔ درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ ہائیکورٹ نے قیاس آرائیوں پر مبنی فیصلہ دے دیا۔ اس فیصلہ کو کالعدم قرار دیا جائے۔

پڑھنا نہ بھولیں:  سابق وزیر داخلہ نے تاحیات نااہلی کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا 

سپریم کورٹ نے خواجہ آصف کی نااہلی سے متعلق درخواست پر نمبر لگاتے ہوئے ابتدائی سماعت کے لیے منظور کر لی ہے۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے تین رکنی لارجر بینچ نے متفقہ طور پر خواجہ آصف کے خلاف فیصلہ دیا تھا۔واضح رہے کہ ہائی کورٹ کا فیصلہ آنے کے بعد خواجہ آصف نے سپریم کورٹ جانے کا اعلان کیا تھا۔