مولانا سمیع الحق کے جاں بحق ہونے پر وزیر اعظم و دیگر کی جانب سے اظہار تعزیت

مولانا سمیع الحق کے جاں بحق ہونے پر وزیر اعظم و دیگر کی جانب سے اظہار تعزیت


24نیوز : جمعیت علمائے اسلام (س) کے سربراہ، مذہبی سکالر و سابق سینیٹر مولانا سمیع الحق قاتلانہ حملے میں جاں بحق ہوگئے ہیں، ملک بھر سے سیاسی و مذہبی رہنماؤں کی  طرف سے شدید مذمت کی جارہی ہے۔

  وزیر اعظم عمران خان نے مولانا سمیع الحق پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور کہا کہ ملک ایک نامور عالم اور اہم سیاسی رہنما سے محروم ہوگیا، مولانا سمیع الحق کی سیاسی و دینی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔ وزیراعظم عمران خان نے مولانا سمیع الحق پر حملے کی رپورٹ طلب کرلی ہے، واقعہ کی فوری تحقیقات کا حکم، ذمہ داروں کو پکڑنے کی ہدایت کر دی۔

کراچی سے وزیر اعلی سندھ مراد علی شاہ نے مولانا سمیع الحق کے قتل پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ان کا کہنا تھا کہ مولانا سمیع الحق کا قتل ملک کے خلاف سازش ہے،  امن امان کی صورتحال خراب کرنے کی کوشش کی جارہی ہے، مولانا سمیع الحق کے قتل کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کرائی جائیں، مولانا سمیع ہمیشہ جوڑنے کی بات کرتے تھے، وفاقی حکومت اسے واقعات کو قابو پانے میں کردار ادا کرے۔

کوئٹہ سے وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے مولانا سمیع الحق کے قتل پر افسوس کا اظہارکیا اور کہا کہ ملک ایک سینئر سیاستدان اور عالم دین سے محروم ہو گیا۔

مولانا طاہر اشرفی کا کہنا ہے کہ مولانا سمیع الحق عالم اسلام کے عظیم رہنما تھے، ان کو بے دردی سے شہید کیا گیا، مولانا سمیع الحق کی شہادت گھناؤنی سازش ہوسکتی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ مولانا سمیع الحق کی شہادت پر فیاض الحسن کا بیان غیر ذمہ دارانہ ہے، فیاض الحسن چوہان اپنے بیان کے بعد مستعفی ہو جائیں، مولانا سمیع الحق کے خاندان میں کوئی اختلافات نہیں تھے۔

 

گورنر سندھ عمران اسماعیل نے معروف عالم دین مولانا سمیع الحق کے قاتلانہ حملہ میں جاں بحق ہونے پر افسوس کا اظہار کیا، ان کا کہنا ہے کہ یہ انتہائی افسوس ناک واقعہ ہے جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔

گورنر سندھ گورنر سندھ عمران اسماعیل  نے آئی جی سندھ ڈاکٹر سید کلیم امام سے ٹیلی فونک رابطہ کیا، صوبہ میں مذہبی و سیاسی رہنماؤں کی سکیورٹی سخت کرنے کی ہدایت جاری کر دی۔

اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الہی نے مولانا سمیع الحق کے قتل پر افسوس کا اظہار کیا ان کا کہنا ہے کہ مولانا سمیع الحق کی دینی اور سیاسی خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی۔

جے یو آئی سندھ  کے سیکرٹری جنرل علامہ راشد محمود سومرو نے مولانا سمیع الحق کی شہادت کی مذمت کی ہے اور کہا کہ راولپنڈی میں مولانا سمیع الحق کو اس وقت نشانہ بنایا گیا جب ملک بھر میں ناموس رسالت احتجاج کیا جا رہا ہے، تحریک انصاف کی حکومت مولانا سمیع الحق کے قتل میں برابر کی شریک ہے، موجودہ حکومت میں علماء کرام کے جانوں کو خطرہ ہے۔

ان کا مزید کہنا ہے کہ  ناموس رسالت کی تحریک کو سبوتاژ کرنے کیلئے مولانا سمیع الحق کو شہید کر دیا گیا ہے،  ہم دھمکیوں سے ڈر کر پیچھے نہیں ہٹیں گے حکومت کا تختہ الٹ کر سانس لیں گے، ایم ایم اے کے مرکزی صدر مولانا فضل الرحمان کو بھی دھمکیاں دی جا رہی ہیں، مولانا سمیع الحق کے قاتلوں کو گرفتار کر کے کیفر کردار تک پہنچایا جائے۔

شازیہ بشیر

   Shazia Bashir   Edito