پنجاب بھر میں حکومتی مشینری فعال،تجاوزات کیخلاف آپریشن جاری



لاہور( 24نیوز )پنجاب حکومت نے صوبہ بھرمیں تجاوزات کیخلاف آپریشن شروع کردیا ہے، لاہور،ملتان،فیصل آباد،راولپنڈی،گوجرانوالہ سمیت جہاں جہاں بھی تجاوزات قائم ہیں آپریشن کیا جارہا ہے۔

لاہورمیں آج سے شروع ہونے والے تجاوزات کیخلاف آپریشن میں 31 ہزار687 کنال اراضی قبضہ مافیا سے واگزارکروائی جائے گی۔ آپریشن کا آغاز ارود بازار اور انارکلی سے ہوگا، تجاوزات کے خاتمے کے لیے ڈی سی لاہور کیپٹن (ر) انوارالحق کی زیر صدارت اجلاس ہوا۔ ڈپٹی کمشنرکاکہناتھاکہ بازاروں میں عارضی وپختہ تجاوزات کو بھی ہٹایا جائے گا۔ تمام تیاریاں مکمل ہیں۔ تجاوزات و قبضہ کی ہوئی اراضی پر پر محکموں کی طرف سے نشانات لگا دیئے گئے۔ ضلعی انتظامیہ کے ترجمان کے مطابق ضلعی سطح پر مستقل انسدادِ تجاوزات سیل قائم کر دیا گیا۔

ویڈیو دیکھیں:

ڈی سی لاہور ، ڈی جی آئی آپریشنز، ایل ڈی اے اور ایم سی ایل تجاوزات مہم کے اہم ارکان ہوں گے۔ اجلاس میں عدالتی کیسوں کے حوالے سے مربوط لیگل سپورٹ کی فراہمی کا بھی فیصلہ کیا گیا۔ انسدادِ تجاوزات مہم میں بھاری مشینری کا استعمال کیا جائے گا۔ تجاوزات ہٹانے کے لئے دو ٹیمیں بنائی گئی ہیں۔ ٹیم نمبر 1 ایل ڈی اے اور ایم سی ایل پر مشتمل ہو گی۔ ٹیم میں 40 ملازمین، 20 ٹرک اور دو لوڈرز شامل ہیں۔ ٹیم نمبر 2 میں ایم سی ایل اور والڈ سٹی شامل ہیں۔ ٹیم میں 40 ملازمین اور بھاری مشینری شامل ہیں۔ پولیس کی نفری بھی ٹیم کے ہمراہ ہو گی۔

ایل ڈی اے نے پولیس کے ہمرا ہ جوہر ٹاﺅن اور دیگر علاقوں میں آپریشن کیا ،منشا بم کے زیر قبضہ تمام اراضی واگزار کروا لی گئی ہے،ڈی سی لاہور نے کہاکہ شہری خود ہی تجاوزات کا خاتمہ کر دیں۔ علاوہ ازیں لاہورکے تمام زونز کی انتظامیہ نے تجاوزات پر سرخ رنگ سے کراس کے نشانات لگا دیئے۔ ان مقامات کی آج سے مسماری شروع کی جائے گی۔

ملتان کے حسین آگاہی،خانیوال روڈ،بوسن روڈ سے تجاوازت گرائی جارہی ہیں،انتظامیہ کسی سے بھی رعایت نہیں برت رہی اور بلا امتیاز کارروائی جارہی ہے-