جڑانوالہ کی 7 سالہ بچی مبشرہ کے قتل، زیادتی کا چیف جسٹس نے از خود نوٹس لے لیا

جڑانوالہ کی 7 سالہ بچی مبشرہ کے قتل، زیادتی کا چیف جسٹس نے از خود نوٹس لے لیا


 جڑانوالا(24نیوز)چیف جسٹس پاکستان نے جڑانوالہ کی سات سالہ بچی مبشرہ کے قتل اورزیادتی کا نوٹس لے لیا، چیف جسٹس نے آئی جی پنجاب سے 48 گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی ہے۔

 جڑانوالا میں یونیورسٹی کی طالبہ عابدہ اورننھی مبشرہ کے قتل کےخلاف دوسرے روز بھی احتجاج کیا گیا۔ مشتعل مظاہرین ہاتھوں میں ڈنڈٖے لئے سڑکوں پرنکل آئے۔ مظاہرین نے راہگیروں پر تشدد کیا اور دکانیں بند کرادیں۔ دوسری طرف پولیس مظاہرین کو قابو کرنے میں ناکام دکھائی دی۔

یہ بھی پڑھیں:جڑانوالہ: انسان نما گدھ نےمعصوم بچی نوچ ڈالی
 
تحصیل بارکی کال پر وکلا نےبھی عدالتی بائیکاٹ کیا۔ وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے۔ پرائیویٹ اسکول ایسوسی ایشن کی ہڑتال کے باعث تمام نجی اسکول بند رہے۔ پولیس عابدہ اور مبشرہ کے قاتلوں کو تاحال گرفتار نہیں کرسکی۔

قبل ازیں عابدہ اور مبشرہ کے قتل کے خلاف  احتجاج کیا گیا۔ مشتعل مظاہرین ڈنڈے لے کر سڑکوں پر نکل آئے۔ جبکہ تحصیل بار کی کال پر وکلا نے عدالتی بائیکاٹ کیا۔  دوسری جانب نجی اسکول بھی بندرہے۔