مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ سے بھارتی و برطانوی ہائی کمشنرز کی ملاقاتیں


اسلام آباد(24نیوز) مشیر قومی سلامتی ناصر جنجوعہ سے بھارتی ہائی کمشنر، برطانوی ہائی کمشنر اور ترکش نیول چیف نے الگ الگ ملاقاتیں کیں۔ ملاقاتوں میں باہمی تعلقات کے فروغ، علاقائی سکیورٹی، پاکستان اور افغانستان سے متعلق امور اور افغانستان اور شام کی صورتحال پر بھی بات چیت کی گئی۔

24 نیوز کے مطابق قومی سلامتی کے مشیر ناصر جنجوعہ سے بھارتی ہائی کمشنر اجے بساریہ کی ملاقات میں مقبوضہ کشمیر کی صورت حال زیر غور آئی۔ ناصرجنجوعہ کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی تشویشناک ہے۔ کشمیریوں کی خواہش پر مسئلہ کا حل چاہتے ہیں۔ بھارت کے ساتھ تمام تنازعات جامع بات چیت سے حل کرنا چاہتے ہیں۔

  بھارتی ہائی کمشنر کا کہنا تھا کہ پاکستان اور بھارت کو ایک دوسرے کی ضرورت ہے۔ تعلقات کی بہتری کے لیے چھوٹے چھوٹے اقدامات کرنا ہوں گے۔ قیدیوں اور میڈیکل ٹیمز کا تبادلہ اور تجارتی روابط اہم کردار ادا کر سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:وزیراعلیٰ سندھ کے عوامی شکایتی مرکزکی کارکردگی رپورٹ جاری
 
دریں اثنا مشیر قومی سلامتی اور برطانوی ہائی کمشنر تھامس ڈریو کی بھی ملاقات ہوئی جس میں علاقائی سکیورٹی سمیت پاکستان اور افغانستان سےمتعلق امور پر بات چیت کی گئی۔ ناصر جنجوعہ کا کہنا تھا کہ پاکستان اور افغانستان کو سیاسی، سفارتی اور فوجی تعلقات مزید مضبوط بنانا ہوں گے جو افغانستان میں قیام امن پاکستان کے لیے بہت اہم ہیں۔ برطانوی ہائی کمشنر نے افغانستان سمیت علاقائی امن کے لیے تعاون کی یقین دہانی کرائی۔

پڑھنا نہ بھولیں:شیری رحمان نے وزیر اعظم پر تنقیدی نشتر برسا دیئے
 
علاوہ ازیں ناصر جنجوعہ کی ترک نیول چیف وائس ایڈمرل عدنان ازبل سے ملاقات ہوئی جس میں افغانستان اور شام کی صورتحال پر بات چیت ہوئی۔ مشیر قومی سلامتی کا کہنا تھا کہ پاکستان کے ترکی کے ساتھ مثالی تعلقات ہیں۔ دونوں ملکوں کے عوام کی آپس میں محبت اور گرم جوشی کی مثال نہیں ملتی۔

ٖٖضرور پڑھیں:امریکہ نے پاکستان کی دو سیاسی جماعتوں کو دہشتگرد قرار دیدیا
 
ترکش نیول کمانڈر نے خطے میں امن کے استحکام میں پاکستان کے کردار کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے اپنی سرزمین سے دہشت گردی کا خاتمہ کر دیا۔ ہمسایہ ملک میں بدامنی کے باعث ترکی کو بھی قومی سلامتی کے چیلنجز کا سامنا ہے۔ترک نیول چیف نے دفاع اور دفاعی پیداوار میں تعاون بڑھانے کی خواہش کا بھی اظہار کیا۔