سابقہ حکومتوں میں نیشنل ایکشن پلان پر عمل کرنے کی صلاحیت نہیں تھی:شاہ محمود قریشی



اسلام آباد(24نیوز)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہےکہ بھارتی وزیر اعظم جنگی جنون کا شکار ہیں جن کی پالیسیوں کے باعث مسئلہ کشمیر عالمی سطح پر اجاگر ہوا ہے، ماضی کی حکومت میں نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کی اہلیت نہیں تھی لیکن پی ٹی آئی حکومت نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد یقینی بنائے گی۔

اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان کی سیاسی قیادت کو مشاورت کے لیے دعوت دی ہے، موجودہ صورتحال میں قومی اتفاق رائے کی ضرورت ہے جس کے لیے پارلیمانی رہنماؤں کو مشاورت کی دعوت دی، مسلم لیگ (ن) اور پیپلزپارٹی کی قیادت سے بذریعہ ٹیلی فون رابطہ کیا، سیاسی قیادت کا رویہ منفی نہیں تھا مگر ہچکچاہٹ تھی، سمجھ سکتا ہوں ہچکچاہٹ کیوں تھی۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کو پامال کیا جارہا ہے، دنیا سب کچھ جانتے ہوئے بھی خاموش ہے، جب جارحیت کے بادل منڈلا رہے تھے ہم نے سفارتی سطح پر کشمیر کے معاملے کو اٹھایا، مودی کی ذہنی کیفیت کو دیکھتے ہوئے پاکستانی قیادت کو تیار رہنا ہوگا، بھارت، پاکستان کو اقتصادی طور پر گرے لسٹ میں شامل کرنےکیلئے اپنی ساری کوششیں بروئےکار لارہا ہے۔

تقریب سے کشمیری راہنما یاسین ملک کی اہلیہ اور سابق سفیر ریاض کھوکھر نے بھی خطاب کیا۔ وزیر خارجہ نے اس موقع پر طلبا کے سوالوں کے جوابات بھی دیے

اظہر تھراج

Senior Content Writer