علما مشائخ کمیٹی نے صوبائی وزیرقانون رانا ثناء اللہ کو کلیئر کردیا


 لاہور(24نیوز)علما مشائخ کمیٹی کےبیشتر ارکان نے پنجاب کے وزیرقانون رانا ثناء اللہ کو کلیئر کردیا۔ رانا ثنااللہ نے متفقہ کمیٹی کے سامنے ختم نبوت سے متعلق اپنے عقیدے کی وضاحت کر دی۔ انھوں نے کہاہے کہ جو ختم نبوت کے عقیدے کو تسلیم نہ کرے وہ دائرہ اسلام سے خارج ہے۔

  کمیٹی کے رکن غلام نظام الدین سیالوی کا کہنا ہے کہ علما رانا ثنا اللہ کے عقیدے کے بارے ان کے بیان سے مطمئن ہیں۔ رانا ثنا اللہ کے حوالے سے شک و شبہات دور ہو گئے۔ دربار سیال شریف کے ترجمان سید شمس الرحمان مشہدی نے اجلاس میں شرکت نہیں کی۔

رانا ثناء اللہ کا کہنا تھا کہ مقام مصطفےٰؐ اور ختم نبوت کا عقیدہ ایمان کا بنیادی جزو ہے جو مقام مصطفےٰ کو نہ پہچانے اور ختم نبوت کے عقیدے کو تسلیم نہ کرے وہ دائرہ اسلام سے خارج ہے۔ ختم نبوت پر ایمان نہ ہونے کی وجہ سے قادیانی دائرہ اسلام سے خارج ہیں۔ ہمارا آئیں بھی قادیانی کو غیرمسلم قراد دیتا ہے۔امتناع قادیانی ایکٹ اور قرآن و سنت کے مطابق قادیانی شعائر اسلام پر عمل نہیں کرسکتے۔

غلام نظام الدین سیالوی نے کہا کہ رانا ثناء کی بھی عقیدہ ختم نبوت کے حوالے سے کوئی دوسری رائے نہیں ہے۔ رانا ثناء اللہ کے حوالے سے ہمارے شکوک و شہبات دور ہوگئے ہیں۔ قادیانیوں کے حوالے رانا ثناء کے عقیدے سے ہم مطمئن ہیں۔ کمیٹی کے جو ارکان آج نہیں آئے ان کے سامنے رانا ثناء کا بیان رکھیں گے۔ کمیٹی کے تمام ارکان کے ساتھ مشاورت کریں گے۔ مشاورت کے بعد کمیٹی کا جو حتمی فیصلہ ہوگا اس کا بعد میں اعلان کریں گے۔