24نیوز کی خبر پر ایکشن، بچی پر تشدد کرنے والے استاد کو گرفتار کر لیا گیا

24نیوز کی خبر پر ایکشن، بچی پر تشدد کرنے والے استاد کو گرفتار کر لیا گیا


لاہور(24نیوز) علم اخلاق اور ادب بانٹنے والے اخلاق بھول گئے اور بے ادب ہو گئے،24 نیوز پر  استاد  کے بچی پر تشدد کی خبرنشر ہونےکےبعدپولیس نے بچی پر تشددکرنےوالے  استاد  کو گرفتارکرلیا ۔

تفصیلات کے مطابق شاد باغ میں گھریلو اکیڈمی چلانے والے  استاد  امتیاز علی نے معصوم بچی کو جانوروں کی طرح پیٹ ڈالا،معمولی سوال کا جواب نہ دینے پرکمسن بچی پر وحشیانہ تشدد کیا،  گلا دبایا اور زمین پر گرا کر چھڑیوں کی بارش کر دی ، بچی کی دل دہلانے والی چیخیں بلند ہوتی رہیں، ظالم استادکو ذرا ترس نہ آیا، بچی کوتھپڑوں سےبھی مارا۔

24 نیوز پر خبر نشر ہونے پرایس ایس پی آپریشنز نےایس ایچ اوشادباغ کی سربراہی میں ٹیم تشکیل دی گئی، ٹیم نےچھاپہ مار کراستادامتیاز علی کو گرفتارکرلیا،  بچی کے والدین بھی شادباغ تھانے پہنچ گئے۔

ذرائع کا کہناتھا کہ امتیازعلی نے اپنے گھر پر ہی اکیڈمی بنائی ہو ئی ہے،طلبا اور طالبات پرظلم وستم اس کامعمول ہے، جلاداستاد نےننھی جان پر اس قدرتشدد کیا کہ بچی کی ہچکی بندھ گئی۔ 

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔