کیلی فورنیا میں جج کے اعلیٰ عہدے پر فائز ہونیوالاپہلامسلمان

کیلی فورنیا میں جج کے اعلیٰ عہدے پر فائز ہونیوالاپہلامسلمان


کیلی فورنیا (24نیوز)ریاستہائے متحدہ امریکا کی سب سے گنجان آباد ریاست کیلی فورنیا  پہلا مسلمان جج تعینات کر دیا گیا ، امریکی مسلمان حلیم دھنی دینا کیلی فورنیا ریاست کی کورٹس آف اپیل کے جج کے رتبے پر فائز ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق کیلی فورنیا میں امریکی مسلمان حلیم دھنی دینا کو جج تعینات کردیا گیا، یہ تقرری ایسے وقت میں عمل میں آئی جب شمالی امریکہ میں مسلمان مخالف جذبات بڑھ رہےتھے، امریکی میڈیا کا کہنا تھا کہ وہ ملک کے اُن چند ججوں میں شامل ہیں جو اس مقام تک پہنچے،بقول اُن کے مجھے متعصبانہ رائے زنی سے نمٹنا خوب آتا ہے،ان کا کہنا تھا کہ اگر کوئی مسلمان جج موجود نہ ہو تو کس قسم کی بھیانک باتیں ہو سکتی ہیں، جس بات کی مجھے امید ہے وہ یہ ہے کہ مجھے جواب مل گیا ہے، جو اِس قسم کی سوچ کے ازالے کی مانند ہے‘‘۔

وہ شکاگو کے باسی ہیں اور بھارتی گجراتی گھرانے میں پیدا ہوئے، جنھوں نے امریکہ آنے سے قبل مشرقی افریقہ میں سکونت اختیار کی، ایک والد کی حیثیت سے، دھنی دینا اختتامِ ہفتہ کے دِن اپنے بچوں کے ساتھ گزارتے ہیں، لیکن ہفتے کے عام دنوں میں جج کے طور پر دیگر لوگوں اور خاندانوں کے رہن سہن میں وہ بڑے اختیارات کے مالک ہوتے ہیں۔

یوں اسلام کا پیروکار اس پیسیفک ریاست کا انتہائی سینئر جج مقرر ہوا جو کہ مسلمان ہے، جنھوں نے امریکہ کے کمرہ ٴ عدالت کی سربراہی کا غیرمعمولی اعزاز حاصل کیا، وہ ملک کے اُن چند ججوں میں شامل ہیں جو اس مقام تک پہنچے۔