ڈیم مخالف عناصر کو دو ٹوک جواب

ڈیم مخالف عناصر کو دو ٹوک جواب


اسلام آباد(24نیوز) وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا نے پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے مہمند ڈیم کے کنٹریکٹ منسوخ کرنے کے مطالبات مسترد کردئیے، ان کا کہنا ہے کہ کنٹریکٹ منسوخ کامطالبہ کرنے والے عناصر ڈیمز کے خلاف سازش کررہے ہیں۔

 تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر آبی وسائل فیصل واوڈا نے پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کے مہمند ڈیم کے کنٹریکٹ منسوخ کرنے کے مطالبات مسترد کرتے ہو تے ہوئے کہنا تھا کہ کہ کنٹریکٹ منسوخ کامطالبہ کرنے والے عناصر ڈیمز کے خلاف سازش کررہے ہیں ،یہ عناصر ڈیمز کو متنازعہ بناکر ملکی ترقی کوروکنا چاہتے ہیں ۔

فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ ڈیم ملک اورمیرے لئے زندگی ہے اس سے قطعی طورپر پیچھے نہیں ہٹوں گا ،ڈیم کے کنٹریکٹ میں ہر چیز میرٹ پر ہوئی ہے ، کسی کو تحقیقات کرواناہے تو سو بسم اللہ ،کسی صورت ڈیم کے منصوبے سے پیچھے نہیں ہٹوں گا  اس کو پایہ تکمیل تک پہنچانا ہے، ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم وہ نہیں جو کمیشن کے لئے کام کرتے ہیں ،ہم مردہ لوگوں کو ادائیگی نہیں کرتے اور ایون فیلڈ اپارٹمنٹ بناتے ہیں نہ گھر بیٹھے شوگر ملز بناتے ہیں ۔

قبل ازیں پاکستان پیپلزپارٹی نے مہمندڈیم کے حوالے سے تحقیقات کا مطالبہ کیا، حکومت سے پانچ سوال کئے، پہلا سوال کیا یہ درست ہے کہ مخصوص کمپنی کو ٹھیکہ نوازنے کیلئے دوسری کمپنیوں کی پیشکش کو مستردکیا گیا؟کیا دوسری کمپنیوں کی ڈس کوالیفی کیشن کے بعد دوبارہ بولی ضروری نہیں تھی؟کیا چینی کمپنی کے ساتھ ڈسکن کی شراکت داری عام انتخابات کے بعد نہیں کی گئی؟کیا صرف ایک بولی کی سنوائی پپرا قوانین کی خلاف ورزی نہیں ہے؟