اسرائیلی فائرنگ میں ماری جانے والی طبی رضا کار کی نماز جنازہ ادا  کر دی گئی

اسرائیلی فائرنگ میں ماری جانے والی طبی رضا کار کی نماز جنازہ ادا  کر دی گئی


24نیوز: اسرائیلی فائرنگ میں ماری جانے والی فلسطینی طبی رضا کارکےجنازے میں ہزاروں فلسطینیوں نے شرکت کی۔21 سالہ رزان النجار ایک زخمی شخص کی مدد کے لیےسرحد پرلگی باڑ کی جانب دوڑیں توان کوبندوق سےنشانہ بنایا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق اسرائیلی فائرنگ میں ماری جانے والی فلسطینی طبی رضا کارکےجنازہ ادا کر دی گئی، کارکےجنازے میں ہزاروں فلسطینیوں نے شرکت کی۔صیہونی فوج کی فائرنگ سےشہید ہونےوالی21 سالہ نرس کی نمازجنازہ اداکردی گئی۔ غزہ وزارتِ صحت کےساتھ کام کرنےوالی21سالہ رازان النجار خان یونس میں اپنی پیشہ ورانہ خدمات انجام دیتے ہوئے اسرائیلی فورسز کی فائرنگ سے جاں بحق ہوگئی تھیں۔

یہ بھی پڑھیں:اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے فلسطینی نرس شہید

 رزان النجارکےجنازےکوفلسطینی پرچم میں لپیٹ کرغزہ کی گلیوں سے لےجایا گیا۔ فلسطینی نرس کی آخری رسومات میں ہزاروں فلسطینیوں نےشرکت کی۔

فلسطینی مہاجرین کےحالیہ مظاہروں میں اب تک100سے زیادہ فلسطینی ہلاک ہوچکے ہیں۔ اقوام متحدہ اورانسانی حقوق کی تنظیموں نےاسرائیل کےطاقت کے بےجا استعمال پرتشویش کا اظہار کیا ہے۔