تین ستونوں میں سے ایک کا ریاست پر قبضہ ہے:نواز شریف


اسلام آباد( 24نیوز )سابق وزیر اعظم نواز شریف آج ایون فیلڈ ریفرنس کیس کی سماعت کے سلسلہ میں عدالت پیش ہوئے،وہ پیشی کے دوران بھی گلے شکوے کرتے نظر آئے،انہوں نے یہاں میڈیا سے بھی گفتگو کی۔

سابق وزیراعظم نوازشریف کا کہنا تھا کہ صحافت کے ساتھ ساتھ ہمارا گلا بھی دبانے کی کوشش کی جا رہی ہے، ہمارا مقابلہ پیپلزپارٹی یا پی ٹی آئی سے نہیں بلکہ خلائی مخلوق سے ہے، خلائی مخلوق اپنی مرضی کی پارلیمنٹ لانے میں مصروف ہے، یہاں مغل بادشاہی کا دورنہیں ہے کہ ہرچیز ایک ہاتھ میں ہو اورریاست کے تین ستون ہوتے ہیں جس پر ایک ستون نے قبضہ کر لیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: وزیر اعظم پاکستان کا فاٹا اصلاحات اسی ماہ لانے کا اعلان

نواز شریف نے کہا کہ زرداری صاحب کا بیان مختلف چینلز اور اخبارات پر بریکنگ کے طور پرآیا، اگر زرداری صاحب نے بیان نہیں دیا توبریکنگ کس کے کہنے پر چلائی۔ نوازشریف نے کہا کہ آج پوچھنا چاہتا ہوں کہ پارلیمنٹ اور گورنمنٹ کی رٹ کہاں ہے، جب مجھے پارٹی صدارت سے نکالا گیا تو وہ کس طرح سے قانونی تھا۔

حالات کدھر جا رہے ہیں؟ جاننے کیلئے ویڈیو دیکھیں:

نوازشریف نے کہا کہ نیب کہہ رہا ہے ان کا سورج پورے ملک میں چمک رہا ہے لیکن سندھ میں لوگوں کواستثنا دیا جا رہا ہے۔ 2014 کے دھرنے سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ میرے پاس بہت کچھ ہے جو ابھی منظرعام پر نہیں آیا، دھرنے کے بارے میں بہت سے حقائق ہیں جو جلد منظرعام پرآجائیں گے۔