صنعتی شعبےکواربوں روپے کی چھوٹ، پیپلزپارٹی کا سخت ردعمل

صنعتی شعبےکواربوں روپے کی چھوٹ، پیپلزپارٹی کا سخت ردعمل


اسلام آباد( 24نیوز )صنعتی شعبےکو228ارب روپے کی چھوٹ دینے پرپیپلزپارٹی نے معاملہ پارلیمان میں اُٹھانے کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق حکومت کی جانب سے صنعتی شعبے کو 228 ارب روپے کی چھوٹ دیئے جانے پر پیپلز پارٹی کےسینیٹرنئیربخاری کا کہناتھا کہ بڑے اداروں کوسبسڈی دے کر شہریوں کے ٹیکس پر ڈاکہ ڈالا گیا، صدارتی آرڈنیننس کے ذریعے گیس انفراسڑکچر ڈویلپمنٹ سیس کی مد میں صنعتی شعبے کو 228 ارب روپ کی چھو ٹ دینے کے معاملہ کوپارلیمان میں اٹھانے کا اعلان کیا۔

سینیٹرنئیربخاری کا کہناتھا کہ ترقیاتی ٹیکس میں چھوٹ کا معاملہ پارلیمان میں بھرپور انداز میں اٹھایا جائیگا،قومی خزانے کی حکومتی مالیاتی مافیا میں بندر بانٹ شرمناک اقدام ہے،سرکاری جماعت اور حکومتی شراکت داروں کی مالی مددگاری کا جواب لیا جائے گا، قوم جاننا چاہتی ہے کہ گیس بجلی اور اشیائے ضروریہ پر سبسڈی کی بجائے امرا پر نوازشات کی کیا وجوہات ہیں ؟

ان کا مزید کہناتھا کہ پی ٹی آئی اور حکومتی مالی مددگاروں پرنوازشات عوام دشمنی کی ایک اور مثال ہے،اشرافیہ کی نمائندہ حکومت امراء کو مزید امیر ترین کر رہی ہے۔