گزشتہ حکومتیں ملک کو بحرانوں میں دھکیل ‏گئیں: اسد عمر

گزشتہ حکومتیں ملک کو بحرانوں میں دھکیل ‏گئیں: اسد عمر


اسلام آباد(24نیوز) وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر نے کہا ہے کہ گزشتہ حکومتیں ملک کو بحرانوں میں دھکیل ‏گئیں، معیشت میں بہتری کیلئے بنیادی سمت بدلنے کی کوشش کررہے ہیں، مافیاء ‏کی چیخیں نکل رہی ہیں۔

اسلام آباد میں تحریک انصاف کی سوشل میڈیا ٹیم سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خزانہ ‏ اسد عمر نے کہا کہ ن لیگ کے دور حکومت میں ڈیزل پر ٹیکس ایک سو ایک فیصد ‏تھا، اب ڈیزل پر تمام ٹیکسز صرف 52 فیصد ہیں۔  پیٹرول پر ٹیکسز کم کیئے ہیں۔ اسدعمر نے کہا کہ گزشتہ حکومتیں ملک کو بحرانوں میں دھکیل گئے، اب مافیاء کی ‏چیخیں نکل رہی ہیں، لوگ اگر ٹیکس ایمنسٹی اسکیم سے فائدہ نہ اٹھائیں گے تو ان ‏کیخلاف ایکشن لیا جائیگا۔

تیس سال میں 12 آئی ایم ایف پروگرام کئے ہیں، دیر کرنے ‏سے آئِی ایم ایف کی شرائط میں نرمی آئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ رواں مالی سال میں 2900 ارب روپے ‏کے خسارے بنتے ہیں، بجٹ خسارہ کم کرنے کے اقدامات کررہے ہیں۔ وزیر خزانہ ‏نے کہا کہ بیرونی خسارہ مسلم لیگ ن دور میں دو ارب ڈالر ہورہا تھا، درامدات میں کمی ‏کرنے کیلئے اقدامات کررہے ہیں، جب ذمہ داری آتی ہے تو آپکو بولڈ فیصلے کرنا ‏پڑتے ہیں، بہت سے ماہر معیشت کہہ رہے تھے کہ آئی ایم ایف سے جلد پیکج لیا ‏جائے، اگر روپیہ کو اوور ویلیو رکھیں تو اس کا نقصان عوام کو ہوتا ہے۔ اسد عمر ‏نے بتایا کہ نیشنل پرائس مانیٹرنگ کمیٹی کا اجلاس طلب کیا ہے، جس میں تمام صوبوں ‏کو بھی بلایا گیا ہے، معیشت میں بہتری کیلئے بنیادی سمت بدلنے کی کوشش کررہے ‏ہیں۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔