امریکا کی آج بغداد میں حملے کی تردید

امریکا کی آج بغداد میں حملے کی تردید


واشنگٹن(24 نیوز) امریکا نے آج عراق کے درالحکومت بغداد میں کئے گئے حملے کی تردید کر دی ہے۔عراق میں ایک حملہ کیا گیا جس میں 6 افراد جاں بحق ہو گئے ۔

عراقی فوج کے ترجمان نے بھی کہا ہے کہ آج بغداد میں طبی عملے کے قافلے پر امریکی فضائی حملہ نہیں کیا گیا۔عراقی پاپولر موبلائزیشن فورسز نے بھی اس حوالے سے بیان جاری کیا ہے کہ تاجی کے علاقے میں طبی عملے پر کوئی حملہ نہیں ہوا۔ آج صبح ایک غیر ملکی خبر ایجنسی نے دعویٰ کیا تھا کہ آج بھی عراقی درالحکومت بغداد میں کیے گئے امریکی فضائی حملے میں 6 افراد جاں بحق ہوئے ہیں۔اس حوالے سے عراقی حکام نے شبہ ظاہر کیا تھا کہ حملے میں داعش کے خلاف سرگرم تنظیم الحشد الشعبي (پاپولر موبائلائزیشن فورس) کے ایک اور کمانڈر کو نشانہ بنایا گیا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز صبح سویرے عراق میں بغداد ایئر پورٹ پر امریکی راکٹ حملے میں ایران کی القدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی اور عراق کی الحشد الشعبی (پاپولر موبائلائزیشن فورس) کے ڈپٹی کمانڈر ابومہدی المہندس سمیت 5 افراد شہید ہو گئے تھے۔ایرانی سپریم لیڈر آیت اللّٰہ خامنہ ای اور ایران کے صدر حسن روحانی نے جنرل قاسم سلیمانی کے قتل کا انتقام لینے کے عزم کا اظہار کیا تھا جبکہ ایرانی سپریم لیڈر نے واقعے پر ملک بھر میں 3 روزہ سوگ کا اعلان بھی کیا۔

Malik Sultan Awan

Content Writer