فلسطینی بچوں کا فٹ بالر میسی کے نام رلا دینے والا خط


بیت المقدس (24نیوز) فلسطینی بچوں نے فٹ بال سٹار میسی سے مقبوضہ بیت المقدس میں میچ نہ کھیلنے کی اپیل کردی، بچے کہتے ہیں کہ وہ اللہ سے بھی اس بارے میں دعا کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق ارجنٹائن کے فٹ بالر لیونل میسی سے یہ استدعا فلسطینی بچوں کے ایک گروپ کی ہے۔  جنہوں نے ان سے خط لکھ کر مقبوضہ بیت المقدس کے ٹیڈی سٹیڈیم میں میچ نہ کھیلنے کی اپیل کی ہے۔ یہ خط ارجنٹائن کے سفارتخانے کے حوالے کیا گیا ہے۔ ارجنٹائن اور اسرائیل کے درمیان یہ 9 جون کو یہ دوستانہ میچ یروشلم اس مقام پر کھیلا جائے گا۔ جہاں 70 سال پہلے ایک گاؤں تھا جو عرب اسرائیل جنگ میں تباہ ہوگیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:ویمن ایشیاء کرکٹ کپ میں پاکستانی "کڑیوں"نے تھائی لینڈ کے چھکے چھڑوادیے 

  فلسطینی بچوں نے خط میں لکھا کہ ہمارے دل ٹوٹ گئے کہ میسی ہمارا ہیرو ہمارے آباؤ اجداد کی قبروں پر تعمیر ہونے والے سٹیڈیم میں کھیلنے جا رہے ہیں۔ فلسطین فٹبال فیڈریشن کے صدر جبرئیل راجوب نے فٹ بال شائقین سے کہا ہے کہ اگر میسی مقبوضہ بیت المقدس میں میچ کھیلنے آئے تو وہ ان کی تصاویر اور شرٹس نذرآتش کریں۔