رانا ثنا کا نام سنتے ہی شیخ رشید کی گاڑی کو بریک کیوں لگتی ہے؟

رانا ثنا کا نام سنتے ہی شیخ رشید کی گاڑی کو بریک کیوں لگتی ہے؟


اسلام آباد (24 نیوز) شیخ رشید سے جوپوچھیں کھٹاک سےجواب دیتےہیں لیکن جونہی رانا ثنا اللہ کا اسٹیشن آتاہےتو شیخ صاحب کی ٹرین کوبریک لگ جاتی ہےیافراٹےبھرتی ہوئی آگے نکل جاتی ہے۔

مخالفین پرتنقیدکی بوچھاڑ اور نئے نئے القابات کی بھرمار کرنےوالے شیخ رشید کی تنقیدی گاڑی کی چولیں ہل جاتی ہیں جب کوئی شرارتی ان کےسامنے راناثنااللہ کاذکرکردے۔ راناثنا اللہ کانام شیخ رشیدکی چھیڑہے یاقصہ کچھ اوریہ توشیخ صاحب ہی بہترجانتےہوں گےکیوں کہ لیگی رہنماپر ٹھوس الزامات کی بجائے آئیں بائیں شائیں موصوف وزیر کی پہچان بنتی جارہی ہے۔

 پی اے سی کاممبرنہ بنانے پرجناب شیخ صاحب اسپیکر اسدقیصرسے بھی کچھ خفا دکھائی دیتے ہیں۔ اب کھل کرتو تنقید کرنہیں سکتے بس پھیکی پھیکی باتوں سے ہی بھڑاس نکال رہے ہیں۔ راناثنا اللہ کانام شیخ رشیدکی چھیڑہے یاقصہ کچھ اوریہ توشیخ صاحب ہی بہترجانتےہوں گے کیوں کہ لیگی رہنماپر ٹھوس الزامات کے بجائے آئیں بائیں شائیں موصوف وزیر کی پہچان بنتی جارہی ہے۔