ایران امریکا کشیدگی، ترجمان پاک فوج کا وضاحتی بیان جاری



اسلام آباد(صغیرچودھری) ترجمان پاک میجر جنرل آصف غفور نےایران امریکا کشیدگی میں پاکستان امریکا کا ساتھی بننے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ  عوام صرف میڈیا اور مستند ذرائع پر یقین رکھیں، پاکستان  اپنی سرزمین کسی کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گا۔

تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی افواہیں کہ پاکستان ایران امریکا کشیدگی میں پاکستان امریکا کا ساتھی بننے جا رہا ہے،ان  افواہوں پر ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور نے تردید کرتے ہوئے کہا کہ عوام صرف میڈیا اور مستند ذرائع پر یقین رکھیں،وزیراعظم اورآرمی چیف کئی بارکہہ چکے ہیں،پاکستان اپنی سرزمین کسی کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ اورامریکی وزیرخارجہ مارک پومپیو کےدرمیان ہونےوالی بات چیت کاحوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کاافغان امن عمل میں اہم کرداررہا ہے, افغان امن عمل کوخراب کرنےوالے کسی بھی عمل سے اجتناب کرناچاہیے,کوئی بھی کشیدگی خطے کے لیے بہترنہیں ہے،گزشتہ چار دہائیوں سےخطے کومسائل کاسامنا ہے۔

ترجمان پاک فوج نے واضح کیا کہ  ہم کسی کے ساتھ نہیں،امن کےساتھ ہیں، بھارت کے نئے آرمی چیف کےدھمکی آمیز بیان پر ڈی جی آئی ایس پی آر نے جواب دیا کہ وہ کرسی پر نئے ہیں بھارتی فوج میں نئے نہیں،ان کو پاک فوج کی طاقت کا بھر پور اندازہ ہے،افواج پاکستان ملکی دفاع کرنا جانتی ہے،خطے میں امن چاہتے ہیں ملکی سلامتی پر کسی قسم کا کوئی سمجھوتہ نہیں ہو گا.

 بھارت اپنے ہی ہاتھوں تباہی کی طرف جا رہا ہے پاکستانی فوج ملک کا دفاع کرنا جانتی ہے،بھارتی جارحیت پر دشمن کے 2جہاز مار گرائے ،بھارتی آرمی چیف دھمکیاں دینے کی بجائے مقبوضہ کشمیر میں مظالم کم کرائیں۔