لڑکی نے صبح ہوتے ہی گھر کیوں چھوڑ دیا؟

لڑکی نے صبح ہوتے ہی گھر کیوں چھوڑ دیا؟


نئی دہلی(24نیوز)بھارت میں لڑکیوں سے زیادتی کی خبریں تو زبان زد عام تو رہتی ہیں لیکن یہاں بیوی نے خاوند کو اس لیے چھوڑدیا کہ وہ ہر رات اپنی ہوس جبراً پوری کرتا۔
برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق لڑکی نے اپنی روداد بتاتے ہوئے کہا کہ مجھے یوں محسوس ہو رہا تھا کہ وہ رات نہیں گزرے گی، میرا سر درد سے پھٹ رہا تھا اور میں مسلسل رو رہی تھی،روتے روتے نہ جانے کب آنکھ لگ گئی، صبح چھ بجے جب بیدار ہوئی تو میرا شوہر میرے سامنے سراپا سوال تھا۔ اس نے پوچھا: 'تو تم نے کیا فیصلہ کیا؟ تمہارا جواب ہاں ہے یا نہیں؟مجھے کچھ بھی سمجھ میں نہیں آرہا تھا، پھر بھی ہمت سے بولی۔ 'آج آپ دفتر جائیے پلیز۔ میں آپ کو شام تک فون سے بتا دوں گی۔ میں وعدہ کرتی ہوں،انھوں نے دھمکاتے ہوئے کہا: 'ٹھیک ہے، میں چار بجے خود ہی تمہیں فون کروں گا۔ مجھے جواب چاہیے اور 'ہاں' میں جواب چاہیے۔ ورنہ رات کو سزا کا سامنا کرنے کے لیے تیار رہنا۔
سزا سے اس کا مطلب 'اینل سیکس' تھا۔ اسے پتہ تھا کہ اس سے مجھے بہت درد ہوتا ہے۔ لہذا اس نے اسے مجھے پر 'تشدد' کا طریقہ بنا لیا تھا،نو بجے تک، وہ اور اس کی بڑی بہن دونوں دفتر جا چکے تھے۔ میں گھر میں تنہا تھی۔ گھنٹوں سوچنے کے بعد میں نے اپنے والد کو فون کیا اور کہا کہ میں اب اس کے ساتھ نہیں رہ سکتی،مجھے ڈر تھا کہ والد ناراض ہوں گے۔ لیکن انھوں نے کہا کہ 'بیگ اٹھاو اور وہاں سے باہر نکلو،میں اپنی 'اصل اسناد' اور ایک کتاب لے کر بس اڈے کی جانب بھاگی۔ اپنے شوہر کو میسیج کیا کہ 'میرا جواب نہیں ہے، میں اپنے گھر جا رہی ہوں'، اور فون بند کر دیا۔
تھوڑی دیر بعد میں اپنے عزیزوں کے درمیان اپنے گھر میں تھی۔ میں نے شادی کے دو ماہ بعد ہی اپنے شوہر کا گھر چھوڑ دیا۔ میرا شوہر ساحل، جس سے میں شادی سے تین سال پہلے گریجویشن میں ملی تھی۔