بھارت کو روس سے دفاعی معاہدہ کرنا مہنگا پڑگیا

بھارت کو روس سے دفاعی معاہدہ کرنا مہنگا پڑگیا


نئی دہلی(24 نیوز) بھارت کا جنگی جنون اسی کے گلے پڑگیا، امریکی دفاعی ماہرین نے خبردار کردیا کہ روس سے دفاعی معاہدے کی صورت میں بھارت کو امریکی پابندیوں کا سامنا کرنا ہوگا. 

تفصیلات کے مطابق روسی صدر ولادی میر پیوٹن ان دنوں نئی دہلی کے دورے پر ہیں، اس دوران بھارت اور روس کے درمیان دفاعی نظام خریدنے کا معاہدہ ایجنڈے میں سرفہرست ہے، لیکن یہ معاہدہ بھارت کیلئے گلے کی ہڈی بننے جارہاہے، کیونکہ بھارت نے اگر روس سے دفاعی نظام خریدنے کیلئے روس سے معاہدہ کیا تو امریکا کی جانب سے اس کی کھچائی ہوگی، بھارت کا حال ان دنوں دو ہاتھیوں کی لڑائی میں گیدڑ کی موت کا سا ہے۔

امریکی دفاعی ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ اگر بھارت نے روس سے دفاعی نظام خریدنے کیلئے سمجھوتہ کیا تو اسے اقتصادی پابندیاں کا سامنا کرنا پڑےگا، یہ وقت بھارتی خارجہ پالیسی کے لیے ایک بڑا چیلنج بن کررہ گیا ہے، امریکی میڈیا کےمطابق صدر ٹرمپ نے ماسکو پر پابندیاں عائد کرنے کیلئےاگست میں قانونی مسودے پر دستخط کیے تھے، روس بھارت معاہدے کے بعد ٹرمپ انتظامیہ کیلئے دو ہی آپشن ہوں گی کہ وہ اس معاہدے پر بھارت کو سزا دے اور اس سے دفاعی روابط ختم کرے یا پھر کسی ایک ملک کو استثنیٰ دے، لیکن دوسرا آپشن ٹرمپ انتظامیہ کیلئے قابل قبول نہیں ہوگا کیونکہ ایسا کرنے سے امریکی پالیسی کمزور ہوگی جبکہ امریکا کو فیورٹ ازم کا طعنہ بھی برداشت کرنا ہوگا۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔