امریکا نے ڈومور کا مطالبہ نہیں کیا، وزیر خارجہ


 اسلام آباد ( 24نیوز ) وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ امریکا نے ڈومور کا مطالبہ نہیں کیا۔ پاکستان کا مؤقف خوداری اور بردباری سے پیش کیا۔

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے ملاقات کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ امریکا نے ازسرنو اپنی پالیسی کا جائزہ لیا ہے۔ امریکا اس نتیجہ پر پہنچ چکا ہے کہ افغان مسئلہ کا حل سیاسی مذاکرات ہیں۔ امریکی وزیر خارجہ نے واشنگٹن آنے کی دعوت دی ہے۔ پاکستان کاحقیقت مندآنہ موقف پیش کیا۔

وزیرخارجہ نے مزید کہا کہ ملکی مؤقف کا دفاع میری ذمہ داری ہے۔ پاک امریکا تعلقات تعطل کا شکار تھے۔ پہلاغیرملکی دورہ افغانستان کاکروں گا۔ افغانستان میں امن کا فائدہ پاکستان کو پہنچے گا۔ امریکا طالبان کے ساتھ براہ راست مذاکرات پر آمادہ ہو چکا ہے۔شاہ محمودقریشی نے واضح کیا کہ پاکستان کی ترقی کا فائدہ افغانستان کو بھی ہو گا۔ پڑوسیوں کے ساتھ مثبت تعلقات رکھنا چاہتے ہیں۔ افغان مسئلے کاحل عسکری نہیں ،سیاسی ہے۔ ملاقات میں افغانستان کاسیاسی حل نکالنے پراتفاق ہوا۔

پاک امریکاتعلقات میں سرد مہری نہیں تھی دونوں ممالک نے ایک دوسرے کا مؤقف تحمل سے سنا۔ ہم نےملاقات میں فنڈز لینے کے معاملہ پر کوئی بات نہیں کی۔ سیاسی وعسکری قیادت کی  مشترکہ ملاقات سےمثبت پیغام گیا۔

شازیہ بشیر

   Shazia Bashir   Edito