کراچی: میٹرک کے سالانہ امتحانات، نقل کا بازار گرم

کراچی: میٹرک کے سالانہ امتحانات، نقل کا بازار گرم


  کراچی میں میٹرک کے امتحانات کے دوران ایک طرف نقل کا بازار گرم ۔ ہے تو دوسری جانب لوڈشیڈنگ نے طلبہ و طالبات کو گرمی سے نڈھال کررکھا ہے۔

 تفصیلات کے مطابق نقل کی روک تھام کرنے والے خود ہی نقل کی سہولیات فراہم کرنے لگے۔ صدر کے گورنمنٹ کوتوال اسکول میں متعدد طلبہ کو خصوصی کمرے میں بٹھا دیا گیا۔ یعنی جو کرنا ہے آرام سے کرو۔

یہ بھی پڑھیں:کراچی: میٹرک کا امتحان طلبہ کے لئے کڑا امتحان بن گیا
 
اس دوران میٹرک بورڈ کے چیئرمین سعید الدین امتحانی مراکز کے دوروں پر چل پڑے سعود آباد کے گورنمنٹ بوائز سیکنڈری اسکول پہنچے تو ایک طالبِ علم کی جگہ دوسرا بچہ امتحان دیتے ہوئے پکؑڑا گیا۔ امیدوار کو تین سال کے لئے امتحان دینے سے روک دیا گیا جبکہ نگرانِ امتحان کو معطل کردیا گیا۔

یہ تو تھی نقل کی کہانی اور اب سنیئے انتظامی نا اہلی گرم موسم اور لوڈ شیڈنگ کا عزاب طلبا و طالبات کے لئےامتحان واقعی امتحان بن گیا۔ کہیں بجلی تھی تو پنکھے نہ تھے۔ لوڈشیڈنگ کا حال دیکھا تو چیئرمین میٹرک بورڈ بھی بول پڑے۔

میٹرک کے امتحانات سے قبل دعوے اور وعدے تو کیئے گئے تھے۔ نہ نقل کم ہوئی اور نہ ہی لوڈشیڈنگ سے امتحانی مراکز بچ سکے۔