"وزیراعظم کے کہنے پر نیب نے ریاستی دہشت گردی کی"



(24 نیوز) مسلم لیگ ن نے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر کے فون کا فرانزک آڈٹ کا مطالبہ کردیا، مریم اورنگزیب کہتی ہیں نیب کے پاس حمزہ شہباز کی گرفتاری کا کوئی وارنٹ نہیں تھا، دو روز میں جو کچھ ہوا اس کا مرکزی کر دار عمران خان ہیں۔

پاکستان مسلم لیگ (ن)کی ترجمان مریم اور نگزیب نے میڈیا سے گفتگو میں لاہور ہائی کورٹ کی جانب سے حمزہ شہباز شریف کی عبوری ضمانت پر اللہ کا شکر ادا کرتے ہیں ۔ان کا کہنا تھا آج قانون کی فتح ہوئی نیب کو سمجھایا گیا کہ لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ پڑھ لیں ۔انہوں نے کہاکہ ایک روزقبل وزیر اعظم نے کہ دیا تھا میں پوری اپوزیشن کو جیلوں میں ڈالوں گاحکومتی اور نیب گٹھ جوڑ نے ریاستی دہشت گردی کی ،وہ وزیراعظم جو کنٹینر پر دھمکاتے تھے آج ریاستی اداروں کو استعمال کررہے ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ نیب عدالت نمبر پانچ میں گئی ،نیب کورٹ نے نیب کی درخواست کو مسترد کیا نیب ہٹ دھرمی کے ساتھ کھڑی رہی۔ نیب کی ٹیم وزیراعظم کے حکم پرریاستی دہشت گردی کرکے واپس روانہ ہوئی ۔ انہوں نے کہاکہ فواد چودھری کی پریس کانفرنس جھوٹ ہے ،پرویز مشرف کا ترجمان فواد چودھری عوام کو گمراہ کررہے ہیں۔

مریم اور نگزیب نے کہاکہ (ن ) لیگی حکومت نے قرضے لیے تو موٹروے اور منصوبے لگے۔ موجودہ حکومت وزیر اعظم کا خرچہ چلانے کیلئے 34 ارب ڈالر قرضہ لے چکی ہے۔