آئی ایم ایف سے مذاکرات،حکومت نے مرکزی بینک کا قرضہ واپس کرنا شروع کردیا


اسلام آباد (24نیوز) آئی ایم ایف سے مذاکرات کے پیش نظر حکومت نے مرکزی بینک کا قرضہ واپس کرنا شروع کر دیا، تاہم زیادہ رقم کمرشل بینکوں سے نیا قرض لے کر ہی واپس کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق اسٹیٹ بینک کے مطابق گزشتہ ہفتے کے دوران حکومت نے مرکزی بینک کا 80 ارب 36 کروڑ روپے کا قرض واپس کیا، اس میں سے 50 ارب 8 کروڑ روپے کمرشل بینکوں سے قرض لیا گیا،جبکہ اس سے پچھلے ہفتے کے دوران بھی حکومت نے مرکزی بینک کو 42 ارب روپے واپس کیے تھے.

آئی ایم ایف کی شرائط کے باعث قرضہ پروگرام کے دو سال کے دوران حکومت نے مالی سال پندرہ اور سولہ میں مرکزی بینک سے قرض لینے کی بجائے مجموعی طور پر 909 ارب روپے واپس کیے تھے،، لیکن قرض کی پوری رقم ملتے ہی بجٹ اخراجات کے لیے مرکزی بینک سے قرض لینے کا سلسلہ دوبارہ شروع ہو گیا۔

تاہم آئی ایم ایف کی طرف سے قضے کی پوری رقم دینے کے بعد بھی پروگرام کی شرائط پر عمل درآمد کی نگرانی کا سلسلہ جاری ہے اور اسی سلسلے میں مزاکرات جاری ہیں۔