شہباز شریف کو جیل ہوگئی


لاہور( 24نیوز )احتساب عدالت نے قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا،ان کے جسمانی ریمانڈ میں توسیع کی درخواست مسترد کردی گئی ہے۔

ن لیگی کار کنوں پر پولیس کا لاٹھی چارج،متعدد زخمی

قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی احتساب عدالت میں پیشی کے دوران پولیس اور ن لیگی کارکنوں کی درمیان لڑائی،پولیس کی جانب سے ن لیگی کارکنوں پر لاٹھی چارج ، متعدد کارکنوں کو گرفتار کرلیا گیا،پولیس کے ڈنڈے پڑنے سے متعدد کارکن زخمی بھی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق آشیانہ اقبال ہائوسنگ اسکینڈل میں گرفتار مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو نیب حکام نے جسمانی ریمانڈ کے خاتمے پر لاہور کی احتساب عدالت پہنچا دی، سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف آشیانہ ہائوسنگ اسکینڈل کے سلسلے میں 5 اکتوبر سے قومی احتساب بیورو (نیب) لاہور کی تحویل میں ہیں۔

ویڈیو دیکھیں:

مذکورہ کیس کی 29 نومبر کو ہونے والی گذشتہ سماعت پر احتساب عدالت نے شہباز شریف کے جسمانی ریمانڈ میں 9 دن کی توسیع کی تھی، شہباز شریف کی پیشی کے موقع پر عدالت کے باہر لیگی رہنما اور کارکنان بڑی تعداد میں موجود ہیں جبکہ پولیس کی بھاری نفری بھی تعینات کی گئی ہے۔

احتساب عدالت کے باہر لیگی کارکنوں نے شور شرابہ کیا اور رکاوٹیں ہٹانے کی کوشش کی، جس پر پولیس نے لاٹھی چارج کیا۔

نیب آشیانہ اقبالہائوسنگ سکیم، صاف پانی کیس، اور اربوں روپے کے گھپلوں کی تحقیقات کر رہا ہے، جس میں سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف سمیت دیگر نامزد ہیں۔آشیانہ اقبال ہائوسنگ سکیم میں لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی (ایل ڈی اے) کے سابق ڈائریکٹر جنرل احد چیمہ اور سابق وزیراعظم نواز شریف کے قریبی ساتھی اور سابق پرنسپل سیکریٹری فواد حسن فواد پہلے ہی گرفتار کیے جاچکے ہیں۔

مزید اہم خبریں اور تبصرے جاننے کیلئے لنک پر کلک کریں: https://www.youtube.com/watch?v=YBZtZyGwOXY