پیپلز پارٹی نے اقلیتی رہنما کرشنا کماری کو سینیٹ الیکشن کیلئے نامزد کردیا


تھرپارکر(24 نیوز) پیپلز پارٹی نے تھر سے تعلق رکھنے والی کرشنا کماری کو سینیٹ الیکشن کیلئے نامزد کیا ہے، اگر وہ منتخب ہوگئیں تو وہ ایوان بالا میں پاکستان کی پہلی ہندو اقلیتی سینیٹر ہوں گی۔
تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی نے ہمیشہ اقلیتوں کی عوامی سطح پر نمائندگی کا خیال رکھا، سینیٹ کے الیکشن میں ایک ماہ باقی رہ گیا، پیپلز پارٹی نے تھر جیسے پسماندہ علاقے سے ہندو برادری کی خاتون کرشنا کماری کو اپنا امیدوار نامزد کیا ہے۔
ہندو اقلیتی برادری کی رہنما کرنشنا کماری بنیں ٹوینٹی فور نیوز کی مہمان، بلیٹن کے دوران گفتگو میں کرشنا کماری نے پیپلز پارٹی کی طرف سے اپنی نمائندگی پر خوشی کا اظہار کیا،کہنے لگیں منتخب ہوکر اپنی کمیونٹی کی خدمت کریں گی۔
کرشنا کماری کا کہنا تھا کہ وہ منتخب ہوکر وہ تعلیم اور صحت کے شعبوں کی ترقی کیلئے کام کریں گی، انہوں نے بتایا کہ نامزدگی کیلئے پیپلز پارٹی کے رہنماؤں نے رابطہ کیا، تھر سندھ کا ایک انتہائی پسماندہ علاقہ ہے، جہاں ترقی کیلئے خصوصی توجہ کی ضرورت ہے، تھر میں صحت اور تعلیم کے حوالے سے مسائل حل کافی سنگین ہیں، جنہیں فوری طور پر حل کرنے کی ضرورت ہے۔