امریکی صدرکے سر کی قیمت مقرر، ٹرمپ کا ایک اور دھمکی آمیز ٹویٹ

امریکی صدرکے سر کی قیمت مقرر، ٹرمپ کا ایک اور دھمکی آمیز ٹویٹ


تہران( 24نیوز ) امریکا اور ایران جنگ کے دہانے پر پہنچ چکے ہیں ، دونوں ممالک ایک دوسرے کو سنگین دھمکیاں دے رہے ہیں، ایران نے امریکی صدر کے سر کی قمیت 8 کروڑڈالر مقرر کردی ہے, ٹرمپ نے کہا کہ ایران پر حملے کیلئے کانگریس سے منظوری کی ضرورت نہیں۔

تفصیلات کے مطابق امریکا ایران میں کشیدگی کی شدت میں مزید اضافہ ہوگیا،  ایران کی القدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد امریکہ سے بدلا لینے کے لئے ایرانی حکومت اور عوام نے سخت بیانات دیئے ہیں،ایرانی کمانڈر جنرل قاسم سلیمانی کی نماز جنازہ گزشتہ روز مشہد میں ادا کی گئی جس میں ہزاروں کی تعداد میں افراد نے شرکت کی۔

برطانوی اخبار کی رپورٹ کے مطابق جنازے کے منتظمین کی جانب سےکہا گیا اس وقت ایران کی آبادی 8 کروڑ ہے اور اس حساب سے  ٹرمپ کا قتل کرنے والے کو 80 ملین ڈالرز کی رقم بطور انعام دی جائے گی۔

دوسری جانب  امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دھمکی آمیز ٹویٹ کیا ہے کہ ایران پر حملے کیلئے کانگریس سے منظوری کی ضرورت نہیں، میرے بیان ہی کانگریس کیلئے نوٹیفکیشن ہیں، امریکی فوج پر حملہ کیا تو یہ ایران کی سب سے بڑی غلطی ہوگی۔