مہنگائی کےطوفان نےعوام کو ہائی وولٹیج جھٹکا لگادیا



لاہور( 24نیوزرمضان کی آمدکےساتھ ہی منافع خورمافیاسرگرم ہوگئے،اوپن مارکیٹ میں سبزیاں ،پھل،مشروبات ودیگراشیاءکی قیمتوں میں ہوشربااضافہ کردیا۔

تفصیلات کے مطابق رمضان کےچاند سےقبل ملک بھر میں مہنگائی کے جلوے رونما ہوگئے، سبزی ، پھل، گوشت سمیت ہر چیز عوام کی پہنچ سےدور ہوگئی،کھجور اور لیموں کی قیمت بھی 300 روپےکلو سے بڑھ گئی، گھی، چینی، دال، چاول سمیت افطار کی ہر شے مہنگی ہونے سےعوام پریشان ہوگئے،اہلیان لاہور بھی مہنگائی کے سونامی سے پریشان ہیں، ان کا کیا کہنا تھاکہ حکومت عوام کوریلیف دینےمیں مکمل ناکام ہوچکی ہے، سبزیاں ،پھل،گوشت،برائلرسمیت تمام اشیاءعام آدمی کی پہنچ سےدورہوچکی ہیں، رمضان کےبابرکت مہینےمیں بھی مہنگائی کاسامنا ہے،حکومت منافع خورمافیاکےخلاف کارروائی کرنےمیں ناکام ہوگئی۔

سبزی ،پھلوں اور گوشت کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے سے حیدرآباد کے شہری بھی چکرا کر رہ گئے ہیں، مہنگائی کےستائے شہریوں کاکہناتھاکہ رمضان المبارک کی آمد سے قبل ہی سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں اضافہ ہوگیا،ٹماٹر فی کلو 50، توری فی کلو 50، کریلا 60 روپے ،لیموں 400 روپے فی کلو، ادرک فی کلو 200 روپے ، پیاز 40 روپے فی کلو، آلو 20 روپے فی کلو، دھنیاں 100 روپے ،کیلا 100 سے 120 روپے درجن، چیکو 140 روپے فی کلو اور گرما 120 روپے ،سیب 400 سے 450 روپے فی کلو اورتربوز 50 سے 70 روپے فی کلو ہوگیا،مرغی کا گوشت 320 روپے فی کلو اور مٹن، بیف اور مچھلی کی قیمتیں بھی بڑھ گئی ہیں۔

ملتان میں لوکل سیب 300، ترکی کا سیب 450 جبکہ چائینہ کا سیب 550 روپے کلو،خربوزہ 80 سے 120 روپے کلو جبکہ تربوز 40 سے 60 روپے کلو بکنے لگا، کیلا 120 روپے درجن کے حساب سے فروخت ہو رہا ہے،40 روپے پاؤ فروخت ہونے والا لیموں 80 روپے پاؤ فروخت ہونے لگا،ٹماٹر کی فی کلو قیمت 40 روپے ،بھنڈی 100 روپے جبکہ ٹنڈے 150 روپے فی کلو ک،پیاز کی قیمت 20 روپے فی کلو سے 50 روپے فی کلو تک جا پہنچی ہے۔

پشاور میں بھی رمضان آتے ہی دیگر اشیا خوردنوش کیطرح سبزیوں کی قیمتوں کو پر لگ گئے۔سبزیوں کی قیمتوں میں 10سے 40 روپےیا اس سےبھی زائدکااضافہ ہوگیا،ذرائع کاکہناتھاکہ گزشتہ سال کی نسبت رمضان میں مہنگائی کی شرح میں7فیصدسےزائدکاریکارڈاضافہ ہوا، مہنگائی میں اضافےکی بنیادی وجہ ڈالراورپیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ ہے،غریب عوام مہنگائی کی چکی میں بری طرح پس گئے۔