دنیا بھر میں آج کشمیری یوم شہدا منا رہے ہیں

دنیا بھر میں آج کشمیری یوم شہدا منا رہے ہیں


24نیوز: دنیا بھر میں آج کشمیری یوم شہداء جموں منا رہے ہیں۔ 1947میں پاکستان کی حمایت پر دو لاکھ سے زائد کشمیریوں کو شہید کیا گیا ۔  مشعال ملک کہتی ہیں کہ آر ایس ایس کے غنڈوں نے دنیا کی بدترین نسل کشی کی۔

کنٹرول لائن کے دونوں جانب اور دنیا بھر میں مقیم کشمیری آج یوم شہدائے جموں منارہے ہیں۔  1947میں نومبرکے پہلے ہفتے مہاراجہ ہری سنگھ کی فورسز،،بھارتی فوج اور ہندوانتہاپسندوں نے جموں سے پاکستان ہجرت کرنے والے دو لاکھ کشمیریوں کو شہید کردیاتھا۔

آزادجموں کشمیرکے صدرسردارمسعودخان اوروزیراعظم فاروق حیدرخان کاکہنا ہے کہ نومبر کا پہلاہفتہ کشمیر کی تحریک آزادی کاتاریک ترین ہفتہ ہے جب جموں کے حکمران نے 6نومبر1947 کو بے گناہ مسلمانوں کاخون بہایا۔

حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشال ملک کہتی ہیں کہ آر ایس ایس کے غنڈوں نے مقبوضہ کشمیر میں دنیا کی بدترین نسل کشی کی۔ 2019 میں بھی وہی سرکار ہے ۔ اب بھی وہی ظلم ہو رہا ہے۔

مقبوضہ کشمیر میں آج بھی کرفیو ہے، ہر طرف ہو کا عالم ہے۔ خوراک کا بحران شدید اور ادویات بھی دستیاب نہیں ہے۔

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔