مہنگائی کی شرح 11 اعشاریہ صفر چار تک پہنچ گئی

مہنگائی کی شرح 11 اعشاریہ صفر چار تک پہنچ گئی


اسلام آباد( وقاص عظیم ) جولائی سے اکتوبر تک گیس کی قیمتوں میں 95.74 فیصد اضافہ ہوا، آلو اور چکن 30 فیصد سے زائد مہنگے ہوئے بجلی کی قیمت میں 10.44 فیصد اضافہ ہوا۔

ادارہ شماریات کے مطابق ملک بھر میں مہنگائی کی شرح میں مسلسل اضافہ جاری ہے۔ اکتوبر میں مہنگائی کی شرح 11 اعشاریہ 4 فیصد تک پہنچ چکی ہے،  ستمبر کے مقابلے میں اکتوبر میں مہنگائی میں ایک اعشاریہ 82 فیصد اضافہ ہوا ، مہنگائی جولائی سے اکتوبر تک 10 اعشاریہ 32 فیصد رہی۔

ادارہ شماریات کے اعدادو شمار کے مطابق اکتوبر میں سبزیوں کی قیمتوں میں 15 اعشاریہ 78 فیصد اضافہ ہوا ایک ماہ میں پیاز 10 اعشاریہ 86 فیصد مہنگے ہوئے۔  اس دوران چائے 8.15 فیصد ، دودھ مصنوعات 4.74 فیصد اور آٹا 3.22 فیصد مہنگا ہوا اکتوبر 2018 کےمقابلے میں پیاز 131.08 فیصد مہنگے ہوئے۔ 

گیس کی قیمتوں میں 54.84 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا، دال مونگ 45.47 فیصد ، آلو 45 فیصد اور سبزیاں 39.44 فیصد مہنگے ہوئے۔ ایک سال میں چینی 34.6 فیصد دال ماش 31 فیصد اور گھی کی قیمت میں 17.76 فیصد اضافہ ہوا، اکتوبر 2018 کے مقابلے میں اکتوبر 2019 کے دوران بجلی کی قیمت میں 10.44 فیصد اضافہ ہوا۔

ادارہ شماریات کے مطابق جولائی سے اکتوبر تک گیس کی قیمتوں میں 95.74 فیصد اضافہ ہوا۔ چار ماہ میں پیاز 88 فیصد، دال مونگ 46 فیصد اور چینی 34 فیصد سے زائد مہنگی ہوئی،  آلو 30.92 فیصد اور چکن 30.48 فیصد مہنگا ہوا۔

Malik Sultan Awan

Content Writer