بیٹی کیلئے انصاف کا منتظر باپ عدالت کی دہلیز میں دم توڑ گیا

بیٹی کیلئے انصاف کا منتظر باپ عدالت کی دہلیز میں دم توڑ گیا


کراچی(24 نیوز)سندھ ہائیکورٹ میں بیٹی کے لئے انصاف کا منتظر بوڑھا باپ عدالت میں دم توڑ گیا جبکہ لاش واپس لے جانے کےلئے  اہل خانہ کو ٹریفک پولیس اہلکاروں نے پیسےاکھٹے کر دیے۔

کراچی سندھ ہائیکورٹ میں ایک سال قبل اغوا ہونے والی لڑکی کی بازیابی سے متعلق درخواست پر سماعت ہوئی، احاطے عدالت میں ایک سسال کے بعد اپنے بیٹی کو سامنے پا کر باپ خوشی کو  قابو نہ رکھ پایا اور  دل کا دورپڑنے سےانتقال کرگیا۔ متاثرہ فیملی کا کہنا تھا کہ ان کی بیٹی کو سجاول کے علاقے سے ایک سال قبل اغواء کیا گیا،   اغوا کار ایک جھگڑے میں قتل ہو گیا،جس بعد لڑکی کا نکاح کسی اور سے کردیا گیا۔

ایمبولینس نہ ہونے کے باعث جاں بحق محمد جمع کی لاش گاڑی میں رکھ دی گئی جبکہ اہلخانہ کے پاس لاش کو واپس لے جانے کےلئے پیسے تک نہیں تھے، جس پر ہائیکورٹ کے باہر موجود ٹریفک پولیس اہکاروں نے راہ گیروں سے بول کر پیسہ جمع کرا کے دیئے جس کے بعد جمع کی لاش کو گھر روانہ کردیا گیا۔

Malik Sultan Awan

Content Writer