2 دن جیل کاٹنے کے بعد سلمان خان پر نئی مصیبت ٹوٹ پڑی

2 دن جیل کاٹنے کے بعد سلمان خان پر نئی مصیبت ٹوٹ پڑی


جودھپور (24نیوز) کالے ہرن کے شکار کے کیس میں سزا یافتہ بالی وڈ سٹار سلمان خان کی درخواست ضمانت منظور ہوگئی، سلمان خان نے گزشتہ روز اپنی سزا پر ضمانت کے لیے درخواست دائر کی تھی جس پر عدالت نے کے آج سنانے کا اعلان کیا تھا تاہم ممکنہ طور پر آج دوپہر دو بجے تک فیصلہ سنا دیا جائے گا۔

بھارتی میڈیا کےمطابق جودھ پور کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کی عدالت کے جج روندا کمار جوشی نے آج سلمان خان کی درخواست ضمانت پر فیصلہ سنانا تھا تاہم اس سے قبل جج کا تبادلہ کردیا گیا ہے۔

بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ راجستھان ہائیکورٹ  جج روندرا کمار جوشی سمیت 87 ڈسٹرکٹ ججز کے تبادلے کردیئے ہیں، کالے ہرن کے شکار کے کیس میں سلمان خان کو سزا سنانے والے جج دیو کمار کھتری کا بھی تبادلہ کردیا گیا ہے۔

بھارتی میڈیا کا کہنا ہیکہ ججز کے تبادلے معمول کی کارروائی ہے اور ہر سال 15 سے 30 اپریل کے دوران راجستھان ہائیکورٹ کی جانب سے تبادلے کیے جاتے ہیں، امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ سلمان خان کی درخواست ضمانت پر فیصلہ سنانے والے جج کے تبادلے کے باعث اداکار کو مزید کچھ راتیں جیل میں گزارنا پڑ سکتی ہیں۔

سلمان خان کی رہائی کھٹائی میں پڑ گئی،چلبل پانڈے جیل میں رہنے پر مجبور

واضح رہے کہ جودھ پور کی عدالت نے کالے ہرن کے شکار کے 20 سال پرانے کیس میں سلمان خان کو 5 سال قید اور 10 ہزار روپیجرمانے کی سزا سنائی ہے۔

علاوہ ازیں اداکار کو سیشن جج کی جانب سے ضمانت دیے جانے کے معاملے پر راجستھان کا بشنوئی قبیلہ ناراض ہے اور انہوں نے اس فیصلے کے خلاف ہائی کورٹ جانے کا اعلان کردیا۔ خیال رہے کہ سیشن جج رویندرا کمار نے سلمان خان کو 7 اپریل کو 50 ہزار روپے کے مچلکوں کے عوض ضمانت دی تھی۔ عدالت نے اداکار کی ضمانت منظور کرتے ہوئے انہیں 7 مئی کو دوبارہ عدالت میں پیش ہونے کا حکم بھی دیا۔

بشنوئی قبیلے نے ہی سلمان خان کے خلاف 20 سال قبل نایاب ہرن کے شکار کا مقدمہ درج کروایا تھا اور اسی قبیلے کے افراد ہی اس کیس میں عینی گواہ ہیں۔

تاہم امکان ہے کہ ایک ہفتے کے اندر ہائی کورٹ میں درخواست دائر کردی جائے گی۔ یاد رہے کہ بشنوئی قبیلے کے حوالے سے کہا جاتا ہے کہ وہ نایاب سیاہ ہرن کو مقدس مانتے ہیں اور اس کی قریبا عبادت بھی کرتے ہیں۔