سطح سمندر سے پانچ ہزار فٹ بلندی پر موسیقی نے سماں باندھ دیا

سطح سمندر سے پانچ ہزار فٹ بلندی پر موسیقی نے سماں باندھ دیا


کراچی( 24نیوز )سطح سمندر سے پانچ ہزار آٹھ سو فٹ بلند ی پر واقع گورکھ قدرت کے حسین نظاروں کا مرکز ہے جہاں پر گورکھ رنگ فیسٹیول کا انعقاد کیا گیا۔ ملک بھر سے آئے پاپ میوزیکل سمیت صوفی اور کلاسیکل کلاکاروں اور فنکاروں نے اپنے فن کا مظاہرہ کیااور حاضرین کا لہو گرمایا۔ گورکھ رنگ فیسٹیول میں سیاحوں کی بڑی تعداد شریک ہوئی۔گورکھ ہل اسٹیشن کے چیئرمین رکن قومی اسمبلی رفیق جمالی کا کہنا ہے کہ ان تقریبات کا مقصد لوگوں کے دلوں کو زندہ رکھنا ہے۔

گورکھ ہل اسٹیشن جسے سندھ کامری بہی کہا جاتا ہے۔ سطح سمندر سے پانچ ہزار آٹھ سو فٹ بلند ی پر واقع گورکھ قدرت کے حسین نظاروں کا مرکز ہے۔ سیاحوں کی دلوں کو تازہ کرنے کے لیے گورکھ ہل اسٹیشن پر گورکھ رنگ فیسٹیول کا انعقاد کیا گیا۔ جس میں ملک بھر سے آئے پاپ میوزیکل سمیت صوفی اور کلاسیکل کلاکاروں اور فنکاروں نے اپنے فن کا مظاہرہ کیا۔ جس سے حاضرین خوب لطف اندوز ہوئے اور خوب ہلا گلا بھی کیا، گورکھ رنگ فیسٹیول میں ملک بھر سے آئے سیاحوں کی بڑی تعداد شریک ہوئی۔ گورکھ ہل اسٹیشن پر موسم سرما میں سردی کا پارہ منفی تین ڈگری تک رہا۔

ادھر گورکھ ہل اسٹیشن کے چیئرمین رکن قومی اسمبلی رفیق احمد جمالی کا کہنا تھا کہ ان تقریبات کا مقصد لوگوں کے دلوں کو زندہ رکھنا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ گورکھ پر ترقیاتی کام جاری ہیں اور وہ دن دور نہیں جب لوگ مری نہیں بلکہ گورکھ کا رخ کریں گے۔ادھر سیاحوں کا کہنا ہے کہ سندھ حکومت کو گورکھ پر خاص توجہ دینے کہ ضرورت ہے تاحم مہنگے ہوٹل اور دیگر سہولیات کی عدم فراہمی گورکھ کی ترقی میں رکاوٹ ہے۔

اظہر تھراج

Senior Content Writer