الیکشن کمیشن نے ن لیگ کے نگران وزیر اعلیٰ پنجاب سے متعلق مطالبہ پر فیصلہ سناد یا

الیکشن کمیشن نے ن لیگ کے نگران وزیر اعلیٰ پنجاب سے متعلق مطالبہ پر فیصلہ سناد یا


لاہور ( 24 نیوز ) الیکشن کمیشن نے ن لیگ کا نگران وزیراعلی پنجاب حسن عسکری کے نام پر نظرثانی کا مطالبہ مسترد کر دیا۔

الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کسی کی ایما پر نہیں، الیکشن کمیشن میرٹ پر فیصلے کرتا ہے۔ سیاسی جماعتیں فیصلہ کرنے میں ناکام ہوئیں تو الیکشن کمیشن نے آئین کے تحت فیصلہ کیا۔ الیکشن کمیشن نے آرٹیکل 224 اے کے تحت متفقہ طور پر وزرائے اعلی مقرر کیے

یہ بھی پڑھیں: مسلم لیگ ن نے حسن عسکری کی نامزدگی مسترد کردی 

اس سے قبل صوبائی دارالحکومت میں لیگی رہنماؤں احسن اقبال، خواجہ سعد رفیق اور خرم دستگیر کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب کے نگران وزیر اعلیٰ کا تقرر انتخابات کے عمل کو مشکوک بنا دے گا۔ ن لیگ کی جانب سے نامزد کیے گئے افراد کی شہرت شفاف اور اچھی تھی۔ جبکہ ان کی غیر جانب داری پر بھی کوئی انگلی نہیں اٹھا سکتا۔ الیکشن کمیشن نے حسن عسکری کا نام فائنل کیا جو کسی بد قسمتی سے کم نہیں ہے۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ ن لیگ ، اس کی قائدین اور پارٹی کی جمہوریت کے حوالے سے نگران وزیر اعلیٰ پنجاب کے خیالات سے تقریباً سبھی واقف نہیں ہیں۔ سوشل میڈیا پر ان کے خیالات اور اخبارات میں شائع ہونے والے کالم ن لیگ کے خلاف اب بھی موجود ہیں، جن میں موجود تعصب کا عنصر بھی سب کے سامنے ہے۔

پڑھنا نہ بھولیں: الیکشن کمیشن نے نگران وزیر اعلیٰ پنجاب اور بلوچستان کا اعلان کردیا 

شاہد خاقان عباسی نے مطالبہ کیا کہ الیکشن کمیشن حسن عسکری سے متعلق اپنے فیصلہ پر نظر ثانی کرے۔ اور پنجاب میں مکمل طور پر غیر جانب دار سیٹ اپ کے لیے یہ ضروری ہے۔