بالغ لڑکا اور لڑکی بغیر شادی کے۔۔۔ بھارتی سپریم کورٹ کا حیران کن فیصلہ

09:20 AM, 7 مئی, 2018

وقار نیازی

(24نیوز) بھارتی سپریم کورٹ کا حیران کردینے والا فیصلہ آگیا،  بھارتی عدالت عظمیٰ نے کہا ہے کہ بالغ لڑکا لڑکی بنا شادی کے بھی ساتھ رہ سکتے ہیں۔
  بھارتی سپریم کورٹ نے کہا ہےکہ ایک بالغ جوڑےکو حق حاصل ہے کہ وہ بنا شادی کےبھی ایک ساتھ رہ سکتے ہیں۔یہ آبزرویشن اس وقت آئی جب ایپکس کورٹ میں نندا کمار کی کیرالا ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف اپیل پر سماعت ہو رہی تھی۔ کیرالا ہائی کورٹ نے نندا کمار اور تشارا کی شادی منسوخ کردی تھی۔

یہ بھی پڑھیں: اپنوں نے ٹھکرایا،غیروں نے سر آنکھو ں پر بٹھایا

بھارتی عدالت نے شادی منسوخ کرتے ہوئے20 سالہ تشارا کواجازت دی کہ وہ جس کے چاہے زندگی گذار سکتی ہے۔عدالت نے تشارا نامی لڑکی کی شادی اس بنیاد پرمنسوخ کی کہ شوہرنندا کمار کی عمر 21 سال سے کم ہے۔ بھارت کا چائلڈ میرج ایکٹ کہتا ہے کہ 18 سے کم لڑکی اور 21 سال سے کم لڑکے کی شادی نہیں ہوسکتی اورنندا کمار ابھی 21 سال کا نہیں ہوا۔
عدالت نے لڑکی تشارا کو اس کے باپ کے حوالے کردیا اور یہ کہا کہ تشارا قانونی طور پرنندا کمار کی بیوی نہیں تھی۔

مزیدخبریں