افغانستان میں طالبان کی ٹھکانوں پر بمباری میں اضافہ کر دیا:امریکی جنرل


کابل(24نیوز)امریکا نے افغانستان میں طالبان کی ٹھکانوں پر بمباری میں اضافہ کر دیا، اس سلسلے میں امریکی بمبار طیارے پاکستان کی فضائی حدود بھی استعمال کر رہے ہیں۔
تفصیلات کے مطابق افغانستان میں امریکی ائر ٹاسک فورس کے کمانڈر میجر جزل جیمز بی ہیکر نے کابل سے ٹیلی کانفرنس کے ذریعے پینٹاگون میں پریس بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کے افغانستان میں طالبان کے ٹھکانے ختم،، اور حکومت کی عملداری قائم کرنے کے پیش نظر فضائی حملوں میں اضافہ کیا گیا ہے،، اس سلسلے میں اوسطا ایک ہفتے مین امریکی اور اتحادی 25 جبکہ افغان ائر فورس 40 فضائی آپریشن کر رہی ہے،، امریکی فضائی آپریشن کے لیے قطر میں الحدید ائیر بیس سے امریکی بمبار بی 52 طیارے پرواز کرتے ہیں،، جو پاکستان کی فضائی حدود سے گزر کر ہی اپنے ٹارگٹ پر پہنچتے ہیں۔
تاہم ایک سوال کہ کیا پاکستان طالبان کے خلاف آپریشن میں مدد کر رہا ہے کے جواب میں امریکی کمانڈر نے کہا کہ یہ وہ چیز ہے جس کے بارے میں ہم اکٹھے کام جاری رکھنے کی کوشش کر رہے ہیں،، اور جنوبی ایشیا کے بارے میں نئی پالیسی کے تحت ہم اس سلسلے میں پاکستان، روس اور ایران کی طرف دیکھ رہے ہیں۔