دل کا مریض اورقید تنہائی، میاں نواز شریف کو علاج میسر نہ آسکا

 دل کا مریض اورقید تنہائی، میاں نواز شریف کو علاج میسر نہ آسکا


لاہور (24 نیوز) میاں نواز شریف کو علاج میسر نہ آسکا، ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان کہتے ہیں کہ میاں نواز شریف کو میڈیکل بورڈ کی سفارشات کے برعکس قید تنہائی میں رکھا گیا ہے اور ماہر ڈاکٹروں کی سفارشات کو بھی نظر انداز کیا جا رہا ہے۔

 دل کا مریض اورقید تنہائی، 3 بار کے وزیراعظم میاں نواز شریف کو دل کا علاج میسر نہ آسکا، حکومت کی طرف سے مجرمانہ غفلت کےساتھ خاموشی بھی سمجھ سے بالاتر ہے، بنیادی حق علاج کی فراہمی میں کیسی انا؟ اس کا جواب کوئی نہیں دے سکا۔

میاں نواز شریف کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے حکومتی اقدامات پر ایک بار پھر تشویش کا اظہارکیا، ٹوئٹرپراپنے پیغام میں ڈاکٹرعدنان کا کہنا تھا کہ میڈیکل بورڈز کی جانب سے میاں نوازشریف کے عارضہ قلب میں مبتلا ہونے کی تصدیق کے باوجود انہیں علاج فراہم نہیں کیا گیا، میاں نوازشریف کومیڈیکل بورڈ کی سفارشات کے برعکس قید تنہائی میں رکھا گیا ہے۔

ڈاکٹر عدنان کا مزید کہنا تھا کہ میاں نواز شریف کو سروسز اسپتال میں داخل کیا گیا جہاں دل کے امراض کے علاج کی سہولت ہی موجود نہیں، میڈیکل بورڈ میں شامل ماہر ڈاکٹروں کی سفارشات کو بھی نظرانداز کیا جا رہا ہے اور میاں نواز شریف کی صحت کو خطرے میں ڈال دیا گیا ہے۔

Malik Sultan Awan

Content Writer