نگران وزیر اعظم کی زیر صدارت پہلا قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس

نگران وزیر اعظم کی زیر صدارت پہلا قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس


اسلام آباد( 24نیوز ) نگران وزیراعظم کی زیرصدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں ملک کی اندرونی اور سرحدی صورتحال پر غور کیا گیا، مسلح افواج کے سربراہان، نگران وفاقی وزراء اور اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔
ذرائع کےمطابق قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں عسکری حکام نے بریفنگ دی اور دہشت گردوں کے خلاف جاری کارروائیوں اور دیگر اقدامات سے آگاہ کیا جب کہ اس دوران ملک کی اندرونی اور سرحدی صورتحال پر تفصیلی غور کیا گیا، اجلاس میں نگران وزیر خزانہ شمشاد اختر نے ایف اے ٹی ایف کے آئندہ اجلاس سے متعلق تیاریوں پر بریفنگ دی اور اس حوالے سے درکار قانونی اور انتظامی اقدامات سےمتعلق بریف کیا۔

یہ بھی پڑھیں: عام انتخابات کا شیڈول تبدیل
ذرائع کے مطابق قومی سلامتی کمیٹی نے ایف اے ٹی ایف سے متعلقہ اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا،اس کے علاوہ وزیراعظم نے کمیٹی کو گزشتہ روز امریکی نائب صدر سے ہونے والی ٹیلیفونک گفتگو سے بھی آگاہ کیا۔
ذرائع کےمطابق قومی سلامتی کمیٹی کا کہنا ہے کہ پاکستان عالمی سطح پر ذمہ داریوں کو پورا کررہا ہے اور مشترکہ مفادات اور اہداف کے حصول کے لیے عالمی تنظیموں کے ساتھ تعاون کررہے ہیں جب کہ ایف اے ٹی ایف کے ساتھ مل کر کام کرنے کے لیے تمام اقدامات اٹھائیں گے۔