کرم ایجنسی میں طوفانی بارشوں اور ژالہ باری سے تباہی

10:46 AM, 8 مئی, 2018

کرم ایجنسی (24نیوز)  طوفانی بارشوں اور ژالہ باری نے تباہی مچادی، کھڑی فصلیں اور باغات تباہ ہوگئے دریائے کرم میں طغیانی آگئی، قبائلی عمائدین نے علاقے کو آفت زدہ قرار دینے کا مطالبہ کر دیا.
ایک ہفتہ سے کرم ایجنسی میں طوفان باد و باراں اور ژالہ باری نے تباہی مچادی، اپر کرم ایجنسی کا علاقہ شلوزان سب سے زیادہ متاثر ہوا، جہاں شدید بارش سے کھڑی فصلیں اور باغ تباہ ہوگئے، کچے مکان گر گئے اور مواصلاتی نظام درہم برہم ہوگیا۔ندی نالوں میں طغیانی آنے سے دریائے کرم کے کناروں پر واقع زرخیز زمینیں دریا کے کٹاؤ کے زد میں آچکی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: ڈاکوؤں کی موٹر سائیکل شو روم پر ڈکیتی کی واردات

شلوزان کے عمائدین نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ  یہاں کے کسانوں کو ریلیف دیا جائے۔قبائلی عمائدین کا کہنا ہے کہ کسانوں نے قرضے رقم سے فصلوں کیلئے بیج خریدے اور فصل کاشت کی، لیکن بارش اور ژالہ باری سے فصل تباہ ہوگئی۔
دریائے کرم پر آباد قبائل نے دریا کے کناروں پر حفاظتی پشتے تعمیر کرنے کا مطالبہ کیا ہے، تاکہ ان کے دیہات اور زمینیں دریا تباہ کن موجوں سے محفوظ رہ سکیں۔

ایک ہفتہ سے جاری بارشوں اور ژالہ باری سمیت بجلی گرنے کے واقعات میں چار افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔

مزیدخبریں