اقتصادی فیصلوں میں تاخیر کا اثرسٹاک مارکیٹ پر ہونے لگا

اقتصادی فیصلوں میں تاخیر کا اثرسٹاک مارکیٹ پر ہونے لگا


کراچی(24نیوز) حکومت کے اقتصادی فیصلوں میں تاخیر اور ابہام نے رواں ہفتے بھی اسٹاک مارکیٹ کو مندی کا شکار رکھا،  ہنڈرڈ انڈیکس مزید 2 فیصد کمی سے 41 ہزار کی سطح سے بھی نیچے آ گیا، سرمایہ کاروں کے 191 ارب روپے ڈوب گئے۔

 پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں ہفتے کے دوران مسلسل مندی کے ساتھ ساتھ کاروبار بھی پہلے سے 22 فیصد کم ہوا،  اقتصادی ماہرین کے مطابق حکومت کی اقتصادی پالیسی واضع نا ہونے کے باعث نئی سرمایہ کاری نہیں ہو رہی جبکہ غیر ملکی سرمایہ کاروں کی طرف سے شئیرزکی فروخت کا سلسلہ بھی جاری رہا. ہفتے کے اختتام پر ہنڈرد انڈیکس مجموعی طور پر 883 پوائنٹ کی کمی سے 40 ہزار 854 پر بند ہوا،  الیکشن کے بعد پہلی مرتبہ انڈیکس 41 ہزار کی سطح سے نیچے آیا ہے. شئیرز کی مجموعی مالیت ایک کھرب 71 ارب روپے کی کمی سے 84 کھرب 87 ارب روپے رہ گئی،  ہفتے کے دوران بیرونی سرمایہ کاری کے حجم میں تقریبا ایک کروڑ ڈالر کی کمی رکارڈ کی گئی۔

وقار نیازی

سٹاف ممبر، یونیورسٹی آف لاہور سے جرنلزم میں گریجوایٹ، صحافی اور لکھاری ہیں۔۔۔۔