خیبر پختونخوا:عمران خان نے ارب پتی وزیر اعلیٰ نامزد کردیا

12:00 PM, 9 Aug, 2018

اظہر تھراج
Read more!

پشاور( 24نیوز )چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے ارب پتی گھرانے کے چشم و چراغ محمود خان کو وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کا امیدوار نامزد کر دیا،محمود خان کا تعلق سوات سے ہے اور وہ خیبر پختونخوا اسمبلی کے حلقے پی کے 9 سے انتخاب جیتے ہیں۔
محمود خان سابق دور حکومت میں صوبائی وزیر کھیل و آبپاشی کے فرائض بھی انجام دے چکے ہیں، اس کے علاوہ محمود خان تحصیل مٹہ کے ناظم بھی رہ چکے ہیں۔
خیال رہے کہ وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کے لیے پرویز خٹک، اسد قیصر اور عاطف خان کے نام لیے جا رہے تھے، عمران خان عاطف خان کو وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا بنانا چاہتے تھے لیکن پرویز خٹک کی سخت مخالفت کی وجہ سے یہ ممکن نہیں ہو سکا۔
ذرائع کا یہ بھی بتانا ہے کہ پرویز خٹک نے ہی محمود خان کا نام وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کے لیے تجویز کیا تھا،محمود خان کا تعلق سوات کی تحصیل مٹہ سے ہے۔محمودخان30اکتوبر1972 کو ڈاکٹر محمدخان کے گھر پیدا ہوئے۔ابتدائی تعلیم پشاورپبلک سکول سے حاصل کرنےکےبعدپشاوریونیورسٹی سے ایگر یکلچرمیں ایم ایس سی کی ڈگری حاصل کی،محمود خان 2012 میں تحریک انصاف میں شامل ہوئے۔2013کےالیکشن میں صوبائی اسمبلی کےرکن بنے۔سابق وزیراعلیٰ کے پی پرویزخٹک کی کابینہ میں کھیل،ثقافت اورآبپاشی کے صوبائی وزیر بھی رہے۔

 یہ بھی پڑھیں:    اپوزیشن جماعتیں دھاندلی اورالیکشن نتائج کے خلاف متحد،شہر شہر احتجاج
25جولائی2018کےانتخابات میں پی کے9 سوات سے ممبر صوبائی اسمبلی منتخب ہوئے۔وزارت اعلیٰ کے ممکنہ ناموں میں ان کانام نہیں تھا۔لیکن پرویزخٹک کی قربت کے باعث انہیں چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نےوزارت اعلیٰ کے لیے نامزدکردیا۔
یاد رہے محمود خان دو ارب اکیاون کروڑ سر سٹھ لاکھ روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں،کروڑوں روپے کی پچپن دکانوں،ستاسی کنال زرعی اراضی کے مالک ہیں،گھر عالیشان ہے جس میں صرف ڈیڑھ کروڑ کا فرنیچر ہے،بیوی کے پاس کئی تولے سونا ہے۔

مزیدخبریں